Wednesday , September 20 2017
Home / ہندوستان / رواداری اور انسانیت کے ذریعہ ہی ہندوستان کی ترقی

رواداری اور انسانیت کے ذریعہ ہی ہندوستان کی ترقی

عوام اور حکومت کے مابین شراکت داری ناگزیر، صدررام ناتھ کووند کا یوم آزادی خطاب

نئی دہلی ۔14 اگسٹ ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) صدرجمہوریہ ہند رام ناتھ کووند نے 71 ویں یوم آزادی تقریب کے موقع پر قوم کے نام اپنے اولین خطاب میں کہا کہ شہریوں اور حکومت کے درمیان شراکت داری سے ہی نئے ہندوستان کی 2022 ء تک ایک پرخلوص اور ہمدرد معاشرہ کے ساتھ جس میں انسانیت کا عنصر شامل ہو جو قوم کے خمیر میں ہے ، ممکن ہے۔ انھوں نے کہاکہ جدوجہدآزادی میں ملک کے گوشہ گوشہ سے مختلف سیاسی اور سماجی مکاتب فکر کے مرد و خواتین نے شرکت کی تھی ۔ انھوں نے جدوجہد آزادی کے قائدین بشمول پنڈت جواہر لال نہرو کو اس موقع پر یاد کیا۔ عوام کو اُن سے وجدان حاصل کرنا چاہئے۔ جذبۂ آزادی کا تعمیر قوم کیلئے احیاء ضروری ہے۔ انھوں نے قول و عمل کی بنیاد اخلاقیات ہونے ، اتحاد اور نظم و ضبط پر یقین رکھنے ، تحریری ورثہ اور سائنس کے نچوڑ پر یقین رکھنے اور قانون کی حکمرانی و تعلیم میں شہریوں اور حکومت کے درمیان شراکت داری کو تعمیرقوم کی بنیادی ضروریات قرار دیا۔ انھوں نے کہاکہ نیا ہندوستان اس کے ذریعہ ہی تعمیر ہوسکتا ہے ۔ آج بڑے شہروں میں ہم اپنے پڑوسیوں کو تک نہیں جانتے ۔ ایک دوسرے کی دیکھ بھال اور شراکت داری کے جذبہ کا احیاء ضروری ہے ۔ اس سے ایک زیادہ پرمسرت اور زیادہ شریف معاشرہ تشکیل پائے گا ، ایک دوسرے کو سمجھنے میں مدد ملے گی اور عظیم تر بے غرضی پیدا ہوگی ۔ انھوں نے کہاکہ سماجی خدمت اور رضاکارانہ خدمت ہندوستان میں آج بھی بڑی حد تک زندہ ہے ۔ انھوں نے اظہارِ مسرت کیا کہ جی ایس ٹی نظام بلا رکاوٹ نافذالعمل ہوگیا۔ انھوں نے کہاکہ یہ ہم سب کیلئے قابل فخر بات ہے ۔ 2022 ء میں ملک اپنی آزادی کے 75 سال مکمل کرے گا اور یہ قومی عہد ہے کہ بعض مطلوب سنگ میل اُس وقت تک نئے ہندوستان کیلئے قائم ہوجائیں گے ۔ انھوں نے کہاکہ نئے ہندوستان کا مطلب واضح طورپر بعض معیاروں کا تعین ہے ۔ جیسے خاندان ، مطالبہ پر برقی سربراہی ، بہتر سڑکیں اور مواصلات ، عصری ریلوے نیٹورک ، تیز رفتار اور پائیدار ترقی وغیرہ ہمارے معیار ہوں گے۔ صدرجمہوریہ نے عوام پر زور دیا کہ کم از کم ایک بچے کو تعلیمیافتہ بنائیں اور اُسے اسکول میں شریک کروائیں۔ اُس کی فیس ادا کریں اور اُس کیلئے کتابیں خریدیں ، کیونکہ یہی نئے ہندوستان کی بنیاد بنے گا ۔ انھوں نے کہاکہ حکومت کی اسکیمیں جیسے ’’بیٹی بچاؤ ، بیٹی پڑھاؤ‘‘اور ’’سوچھ بھارت ‘‘ وغیرہ عوام اور حکومت کی شراکت داری کے بغیر کامیاب نہیں ہوسکتیں۔

TOPPOPULARRECENT