Thursday , August 24 2017
Home / سیاسیات / رواداری ‘ فرنویس پر شیوسینا کی سخت تنقید

رواداری ‘ فرنویس پر شیوسینا کی سخت تنقید

ممبئی 18 جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) چیف منسٹر مہاراشٹرا دیویندر فرنویس کا ایک حالیہ ادبی تقریب میں رواداری سے متعلق ریمارکس پر مضحکہ اڑاتے ہوئے شیوسینا نے آج کہا کہ ہندوستان 100 فیصد روادار ملک ہے اور اسک ی مثال یہ ہے کہ پاکستانیوں کو سرحد پار سے در اندازی کی کئی کوششوں کے باوجود ملک میںسرخ قالین استقبال دیا جاتا ہے ۔ شیوسینا نے اپنے اخبار کے ایک اداریہ میں کہا کہ حکومت نے پاکستان کے سابق وزیر خارجہ خورشید قصوری کو سرخ قالین استقبال دیا اور انہیں سکیوریٹی فراہم کی اور اب رواداری کی بات کی جا رہی ہے ۔ ہندوستان کو اسی طرح رواداری کا مظاہرہ کرتے ہوئے پاکستانیوں کی میزبانی کے فرائض انجام دینے چاہئیں ‘ بھلے ہی سرحد پر کتنی ہی در اندازیاں ہوتی رہیں اور ہلاکتیں ہوتی رہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہلاکتوں کے باوجود پاکستانیوں کا استقبال کرنا اگر رواداری ہے تو پھر ہندوستان ہمیشہ ہی ایک روادار ملک رہے گا ۔ پونے میں منعقدہ ایک مراٹھی ادبی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے دیویندر فرنویس نے کہا تھا کہ ہندوستان ایک روادار ملک ہے اور روادار ملک رہے گا ۔ انہوں نے مصنفین سے کہا تھا کہ وہ منفی تحریروں پر توجہ نہ کریں۔ شیوسینا نے کہا کہ جب غلام علی کو مہاراشٹرا میں روکا گیا تو مغربی بنگال ‘ اتر پردیش اور کیرالا جیسی ریاستوں نے انہیں اپنے پاس مدعو کیا ۔ یہ ان ریاستوں میں رواداری کی مثالیں ہیں۔

TOPPOPULARRECENT