Monday , August 21 2017
Home / دنیا / روس کی ہندوستانی فضائیہ کو مگ۔35کی فروخت سے دلچسپی

روس کی ہندوستانی فضائیہ کو مگ۔35کی فروخت سے دلچسپی

زوکووسکی۔(روس)۔23جولائی ( سیاست ڈاٹ کام) روس کو اپنے نئے لڑاکا جٹ مگ ۔35 ہندوستان کو فروخت کرنے سے گہری دلچسپی ہے ۔ مگ کارپوریشن کے سربراہ نے کہا کہ روس طیاروں کی ہندوستانی فضائیہ کو فروخت سے گہری دلچسپی رکھتا ہے اور سمجھا جاتاہے کہ ہندوستان کی ضروریات کے بارے میں مذاکرات جاری ہیں ۔ ڈائرکٹر جنرل رشین ایئرکرافٹ کارپوریشن مگلیہ ٹاراسمکوف نے کہا کہ مگ۔35 بہترین طیارہ ہے اور یقینی طور پر لاگ ہیڈ مارٹن کے پانچویں نسل کے لڑاکا طیاروں ایف۔35سے بہتر ہے ۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ مگ ۔35 امریکی جیٹ طیاروں کو فضائی لڑائی میں شکست دے سکتا ہے ۔ تارا سنکوف ایک پریس کانفرنس سے میکس 2017 فضائی شو کے موقع پر ایک پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے ۔ قبل ازیں انہوں نے جنوری میں مگ۔35 پیش کیا تھا ۔ مگ کارپوریشن نے اس طیارہ کو ہندوستان اور دنیا کے دیگر علاقوں میں سرگرمی سے فروغ دیا شروع کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم یہ طیارہ ہندوستان میں ٹنڈرس کی طلبی کے ذریعہ سربراہ کرنے کی تجویز رکھتے ہیں ۔ ہندوستانی فضائیہ سے ان کا ٹنڈر حاصل کرنے کیلئے سرگرم مذاکرات جاری ہیں ۔ مگ۔35 روس کا انتہائی ترقی یافتہ چوتھی نسل کا کثیر مقصدی لڑاکاجٹ طیارہ ہے جو مگ۔29کے / کے یو بی اور مگ ۔29ایم / ایم 2لڑاکا طیارہ کی طرز پر تیار کیا گیا ہے ۔ اس سوال پر کہ کیا ہندوستان نے بھی مگ۔35 کی خریداری سے دلچسپی ظاہر کی ہے ۔انہوں نے کہا کہ بے شک انہیں دلچسپی ہے ۔ مگ طیارہ تقریباً 50سال سے استعمال کے زیراستعمال ہے ۔ مگ کارپوریشن کی تجویز ہے کہ اپنی نئی مصنوعات سب سے پہلے ہندوستان کو فروخت کرے ۔ وہ اس کی ہندوستانی کو سربراہی کی تجویز رکھتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ انتہائی عصری لڑاکا طیارے ہیں ۔ ہندوستان کو طیاروں کی سربراہی کے تازہ ترین موقف کے بارے میں سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم ہندوستان سے ٹکنیکل اور ٹیکنیکی وضاحتوں کے بارے میں بات چیت کررہے ہیں جو مگ طیارہ ہندوستان کو فراہم کرسکتا ہے اور ہندوستان کی ضروریات کے بارے میں مذاکرات میں مصروف ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT