Wednesday , October 18 2017
Home / شہر کی خبریں / ریاست میں جبراً حصول اراضیات پر تنقید

ریاست میں جبراً حصول اراضیات پر تنقید

تلگو دیشم پولیٹ بیورو رکن پیڈی ریڈی کا صحافتی بیان
حیدرآباد ۔ 12 ۔ اگست : ( این ایس ایس ) : تلگو دیشم پارٹی نے ریاست تلنگانہ میں کسانوں کی زمینات کو جبراً حاصل کرنے پر ریاستی حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ۔ ایک صحافتی بیان میں تلگو دیشم پولیٹ بیورو رکن ای پیڈی ریڈی نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت تلنگانہ میں جی او 123 کے مطابق کسانوں کی اراضیات کو جبراً حاصل کررہی ہے ۔ جب کہ ریاستی ہائی کورٹ نے احکام جاری کرتے ہوئے جی او کو مسترد کیا ہے اور جب کہ یہ غیر قانونی ہے ۔ انہوں نے کہا عدالت کے احکام کے بعد بھی ریاستی حکومت کریم نگر کے کسانوں کے اراضیات کو ذخیرہ آب کے لیے حاصل کررہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سورارم دیہات میں حکومت نے ایک خاتون کسان چلاوا روپا کی پانچ ایکڑ اراضی کو بغیر کوئی پیشگی نوٹس کے حاصل کرلیا جس سے دل برداشتہ ہو کر اس خاتون کسان نے خود کشی کرلی ۔ تلگو دیشم قائد نے حکومت سے مطالبہ کیا وہ 2013 حصول اراضی ایکٹ کے تحت اراضیات کو حاصل کریں ۔انہوں نے کہا ٹی ڈی پی ریاست کے کسانوں کے کاز کے لیے ان کو انصاف رسانی کے لیے جدوجہد کرے گی ۔۔

TOPPOPULARRECENT