Sunday , August 20 2017
Home / Top Stories / زمین کھسکنے کے واقعات اور سیلاب ، 57 افراد ہلاک

زمین کھسکنے کے واقعات اور سیلاب ، 57 افراد ہلاک

ہماچل پردیش میں دو بسیں بہہ گیئں ، آسام میں راحت کاری کیلئے فوج کی خدمات ، بہار اور مغربی بنگال بھی متاثر

نئی دہلی ۔ /13 اگست (سیاست ڈاٹ کام) ملک کی دو ریاستوں اتراکھنڈ اور ہماچل پردیش میں زبردست بارش کی وجہ سے زمین کھسکنے کے واقعات پیش آئے جس میں 47 افراد ہلاک ہوگئے ۔ اسی دوران مشرقی اور شمال مشرقی ریاستوں میں سیلاب کی صورتحال پیدا ہوگئی ہے اور آسام میں 10 افراد ہلاک ہوگئے ۔اس طرح قدرتی آفات سے جملہ 57 افراد کی موت واقع ہوئی ہے ۔ اتراکھنڈ میں ایک مکان زمین دوز ہوگیا جس میں ایک لڑکی ہلاک ہوگئی اور اس کے والدین لاپتہ ہیں ۔ ہماچل پردیش کے منڈی ضلع میں آج صبح کی اولین ساعتوں میں زمین کھسکنے اور تودے گرنے کے واقعہ میں ہماچل روڈ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی دو بسیں بہہ گئیں جس کے نتیجہ میں کم از کم 50 افراد کی ہلاکت کا اندیشہ ہے ۔ مقامی افراد کے بموجب ایک بس تو کم از کم ایک کیلومیٹر نیچے تک جا گری اور یہاں نعشیں جو دستیاب ہوئی ہیں ان میں بیشتر کے سر ‘ دھڑ سے الگ ہیں یا پھر جسمانی اعضا الگ ہوگئے ہیں۔ چیف منسٹر ویربھدرا سنگھ جائے حادثہ کوٹ روپی گاوں پہونچ گئے ہیں اور وہ امدادی کااموں کی نگرانی کر رہے ہیں۔ چیف منسٹر نے یہاں مہلوکین کے افراد خاندان کیلئے فی کس پانچ لاکھ روپئے ایکس گریشیا کا اعلان کیا ہے ۔عہدیداروں نے بتایا کہ مہلوکین کی تعداد 50 سے متجاوز ہوسکتی ہے ۔ مشرقی اور شمال مشرقی ریاستوں میں بارش نے تباہی مچائی اور آسام کے علاوہ بہار و مغربی بنگال کے بعض حصوں میں سیلاب کی صورتحال پیدا ہوگئی ۔ آسام میں سیلاب کی صورتحال ابتر ہونے کی وجہ سے 10 افراد ہلاک ہوگئے اور 21 اضلاع میں 22.5 لاکھ افراد متاثر ہوئے ہیں ۔ راحت کاری کاموں کیلئے فوج کو طلب کرلیا گیا ہے ۔ ریاست میں آج دوسرے دن سیلاب کی ابتر صورتحال کے سبب مہلوکین کی تعداد بڑھ کر 99 ہوگئی ہے ۔ آسام اسٹیٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھاریٹی نے کہا کہ صورتحال مزید تباہ کن ہونے کا اندیشہ ہے کیونکہ برہم پترا اور دیگر 10 ندیاں 15 مختلف مقامات پر خطرے کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہیں ۔ جنگلاتی علاقہ سیلاب کے پانی کی زد میں ہیں ۔ وزیراعظم نریندر مودی نے چیف منسٹر آسام سربانندا سونووال سے فون پر ربط قائم کیا ۔ انہوں نے صورتحال سے نمٹنے کیلئے ریاستی حکومت کو ہرممکن مدد کا تیقن دیا ۔ نیپال میں گزشتہ تین دن سے جاری بارش کے سبب بہار کے کئی اضلاع میں سیلاب کی صورتحال پیدا ہوگئی ہے ۔ مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ نے چیف منسٹر بہار نتیش کمار سے بات کی اور سیلاب کی صورتحال کے بارے میں تبادلہ خیال کیا جہاں تقریباً 320 این ڈی آر ایف ارکان کو روانہ کیا گیا ہے ۔ نتیش کمار نے بتایا کہ ضلع کشن گنج سب سے زیادہ متاثر رہا ۔ اسی طرح مغربی بنگال میں بھی سیلاب کی وجہ سے کئی ٹرینیں منسوخ کردی گیئں۔

TOPPOPULARRECENT