Monday , April 24 2017
Home / شہر کی خبریں / زچہ اور بچہ کے لیے کے سی آر کٹ اسکیم کا 2 جون سے آغاز

زچہ اور بچہ کے لیے کے سی آر کٹ اسکیم کا 2 جون سے آغاز

لڑکی تولد ہونے پر 15 ہزار کی ادائیگی ، 12 ہفتہ کے حمل سے قبل اندراج ضروری
حیدرآباد۔11ٖٓاپریل (سیاست نیوز) حکومت تلنگانہ کی جانب سے شادی مبارک اسکیم کے بعد اب ریاست میں ’’زچہ اور بچہ‘‘ کیلئے ’کے سی آر کٹ ‘ کے نام سے اسکیم شروع کی جا رہی ہے۔چیف منسٹر تلنگانہ مسٹر کے چندرشیکھر راؤ نے تمام ضلع کلکٹرس کو ہدایت جاری کی کہ وہ یوم تاسیس تلنگانہ 2جون کو اس اس اسکیم کو روشناس کرواتے ہوئے قابل عمل بنانے کے تمام اقدامات کو مکمل بنائیں تاکہ اسکیم پر مؤثر عمل آوری میں کوئی رکاوٹ نہ پیدا ہونے پائے۔ریاستی حکومت نے اقتدار حاصل کرنے کے بعد مسلم لڑکیوں کیلئے شادی مبارک اور غیر مسلموں کیلئے کلیان لکشمی اسکیم کا اعلان کرتے ہوئے شادی کے موقع پر 51ہزار روپئے کا تحفہ پیش کرنے کا اعلان کرتے ہوئے اس پر عمل آوری شروع کروائی تھی اور اب اقتدار کی تکمیل کے تین سال مکمل ہونے پر حاملہ خواتین کی مدد اور زچہ و بچہ کی نگہداشت کیلئے 14ہزار روپئے کے اخراجات کے ذریعہ ’کے سی آرکٹ ‘ کی فراہمی کا فیصلہ کیا گیا ہے اور اگر لڑکی تولد ہوتی ہے تو ایسی صورت میں 15ہزار روپئے پر مشتمل کے ٹی آر کٹ کی فراہمی عمل میں لائی جائے گی۔ حکومت تلنگانہ کی جانب سے فراہم کی جانے والی کے سی آر کٹ کے حصول کے لئے حاملہ خواتین کو 12ہفتہ کے حمل سے قبل اپنا نام اندراج کروانا ہوگا اور اس اندراج کے فوری بعد کاروائی شروع ہوجائے گی۔ جس وقت زچگی ہوگی اس وقت حکومت کی جانب سے فراہم کردہ ’کے سی آر کٹ‘ زچہ کے حوالے کی جائے گی جس میں 12ہزار روپئے نقد اور 2000 روپئے پر مشتمل تولیہ‘ صابن و دیگر اشیاء موجود ہوں گی۔ اسی طرح اگر لڑکی تولد ہوتی ہے تو ایک ہزار روپئے اضافہ دیئے جائیں گے یعنی 15ہزار روپئے پر مشتمل کے سی آر کٹ حوالہ کی جائے گی جس میں 13ہزار روپئے نقد اور 2000روپئے کے اشیائے ضروریہ ہوں گے۔ زچہ اور بچہ کیلئے حکومت تلنگانہ کی جانب سے شروع کی جانے والی اس اسکیم پر ریاست کے 350پرائمری ہیلت مراکز کے علاوہ 102ایریا ہاسپٹلس اور 7سرکاری دواخانوں میں 2جون سے عمل آوری شروع کردی جائے گی۔ بتایاجاتا ہے کہ جن دواخانو ںمیں لیبر روم کی سہولت موجود نہیں ہیں انہیں فوری عصری لیبر روم سے آراستہ کیا جائے گا۔ چیف منسٹر نے دیہی علاقو ںمیں ڈاکٹرس کی کمی کی شکایت کو فوری حل کرنے کے لئے اقدامات کی چیف سیکریٹری مسٹر ایس پی سنگھ کو ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ جو ڈاکٹرس دیہی علاقوں میں خدمات انجام دینے تیار ہیں انہیں خصوصی مراعات اور اعزازیہ کی فراہمی کو ممکن بنانے کی ہدایت دی۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT