Monday , September 25 2017
Home / جرائم و حادثات / سائبر آباد پولیس کی کارکردگی اور چوکسی پر سوالیہ نشان

سائبر آباد پولیس کی کارکردگی اور چوکسی پر سوالیہ نشان

رہزنوں اور سارقوں کی سرگرمیوں میں پھر ایک مرتبہ اضافہ ، خواتین کے گلے سے زیورات کا سرقہ
حیدرآباد ۔ /8 جون (سیاست نیوز) سائبر آباد حدود میں ایک عرصہ تک بند ہونے کے بعد اب رہزنوں و سارقوں کی سرگرمیوں میں پھر اضافہ ہوگیا ہے ۔ گزشتہ روز ایل بی نگر اور کے پی ایچ بی کے بعد آج ایک ہی علاقہ میں تین مقامات پر واردات انجام دی گئی اور تین کے منجملہ دو خواتین کے گلے سے طلائی چین کا سرقہ کرلیا گیا جبکہ ایک خاتون کی مزاحمت سے حالات بدل گئے ۔ نصیب کی بات یہ ہے کہ صرف آدھے گھنٹے کے وقفہ میں تین مختلف مقامات پر ایک ہی ٹولی کی جانب سے واردات انجام دی گئی جو سائبر آباد پولیس کی کارکردگی اور چوکسی پر سوالیہ نشان بن گیا ۔ ہے ۔ تاہم ٹکنالوجی کی مدد سے پولیس نے نااہل اور لاپرواہی کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے اپنی کارکردگی کا ثبوت دیا اور ان دو رہزنوں کو گرفتار کرلیا گیا ہے ، تاہم اس بات کی توثیق نہیں ہوسکی  ۔ بتایا جاتا ہے کہ شہر کے آئی ٹی کاریڈار گچی باؤلی میں دو نامعلوم سارقوں نے آج دہشت مچادی ۔ راستے میں کھڑی خاتون کے علاوہ راہگیر خواتین کو دہشت کا نشانہ بنایا اور ان کے گلے کے طلائی چین کو چھین لیا ۔ پولیس ذرائع کے مطابق آئی ٹی کاریڈار گچی باؤلی میں اشوین نامی خاتون جو سافٹ ویر ملازمہ اور ویپرو کی ملازمہ بتائی گئی ہے ۔

 

اپنی ڈیوٹی کے بعد وہ بس کے انتظار میں سڑک پر ٹھہری ہوئی تھی کہ اچانک دو افراد اور اس کے گلے سے طلائی چین چھین کر فرار ہوگئے ۔ تاہم اسی دوران اس کے قریب اور ساتھی ملازمین نے ڈائیل 100 کو فون پر اس واقعہ کی اطلاع دی اور سارقوں کی نقل و حرکت کو بتایا ۔ اس سے قبل کہ پولیس چوکس ہوتی سارقوں نے گچی باؤلی کے ایک کارپوریٹ بینک کے قریب ٹھہری ہوئی کلپنانامی خاتون کے گلے سے طلائی چین چھین لی اور فرار ہوگئے ۔ سارقوں نے اپنی موٹر سیکل کے رخ کو موڑتے ہوئے ایک اور خاتون کو نشانہ بنایا تاہم وہ پلٹ پڑی  اور مزاحمت کرنے لگی خاتون کی ہمت کو دیکھتے ہوئے سارق فرار ہوگئے ۔ باوثوق ذرائع کے مطابق ڈائیل 100 پر شکایت لینے کے بعد سائبر آباد کمانڈ کنٹرول کو چوکس کیا گیا اور کمانڈ کنٹرول نے فوری ان سارقوں کی نقل و حرکت کو ریکارڈ کرتے ہوئے پولیس کو آگاہ کیا اور گچی باؤلی پولیس نے ان سارقوں کو گرفتار کرلیا جو ان کی حراست میں ہیں تاہم پولیس گچی باؤلی نے اس بات کی توثیق نہیں کی ۔

TOPPOPULARRECENT