Wednesday , June 28 2017
Home / شہر کی خبریں / سائبر حملہ : تمام اے ٹی ایمس بندکردیئے گئے

سائبر حملہ : تمام اے ٹی ایمس بندکردیئے گئے

عوام کو شدید مشکلات کا سامنا، مابعد نوٹ بندی جیسے حالات
حیدرآباد۔16مئی (سیاست نیوز) عالمی سطح پر ہوئے سائبر حملہ کے بعد شہر کے تمام اے ٹی ایم مراکز مقفل کردیئے گئے ہیں ۔ اے ٹی ایم مراکز میں نقد رقومات کی عدم موجودگی کے سبب پیدا شدہ حالات کے باعث دونوں شہرو ںمیں کئی اے ٹی ایم مراکز خدمات انجام نہیں دے رہے تھے اور متعدد شکایات کے باوجود عوام اس مسئلہ کے حل کیلئے کسی بھی بینک کی جانب سے کوئی سنجیدہ اقدامات نہیں کئے گئے بلکہ مسئلہ کو نظرانداز کرتے ہوئے خاموشی اختیار کی جاتی رہی جس کے نتیجہ میں عوام بینکوں میں نقد جمع کروانے سے بھی اجتناب کرنے لگے ہیں لیکن گذشتہ دویوم کے دوران سائبر حملہ کے نام پر تمام اے ٹی ایم مراکز کو بند کردیا گیا جس کے نتیجہ میں عوام کو مزید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ سوشل میڈیا بالخصوص واٹس اپ اور فیس بک پر پھیلائی جانے والی اطلاعات کے سبب لوگو ںمیں مزید خوف و دہشت پھیل رہی ہے اورکھاتہ داروں کی جانب سے کارڈ کے استعمال یا آن لائن خریداری سے بھی اجتناب کیا جانے لگا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ آئندہ دو تین یوم تک مزید اے ٹی ایم مراکز کو بند ہی رکھا جائے گا کیونکہ ہر بینک اور ادائیگی کے ذرائع کی جانب سے اپنے گاہکوں کو محفوظ پلیٹ فارم کی فراہمی پر توجہ مرکوز کی جا رہی ہے۔تفصیلا ت کے بموجب عالمی سطح پرہوئے سائبر حملہ میں ہندستانی کمپیوٹرس کافی زیادہ متاثر ہوئے ہیں لیکن ان کمپیوٹر س میں بیشتر خانگی اداروں کے ہیں جن کی خدمات متاثر ہوئی ہیں اور ہیکرس کے حملہ سے محفوظ نہیں رہ پائے ہیں۔ان سائبر حملوں کی خبر عام ہوتے ہی سوشل میڈیا پر گشت کرنے والی خبروں نے عوام کو تشویش میں مبتلاء کردیا اور بینکوں کے ذمہ داروں کو موجودہ کرنسی قلت کی صورتحال سے نمٹنے کا موقع فراہم کردیا جس کے نتیجہ میں سمجھا جا رہا ہے کہ آئندہ چند یوم تک دونوں شہروں کے علاوہ ریاست کے دیگر اضلاع میں بھی اے ٹی ایم مراکز کی خدمات معطل کردی جائے گی۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT