Saturday , September 23 2017
Home / ہندوستان / سابق پاکستانی فوجی دہلی میں حملوں کا سازشی

سابق پاکستانی فوجی دہلی میں حملوں کا سازشی

نئی دہلی ۔ 23 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) دہلی، پنجاب اور آسام کی پولیس کو آج صیانتی محکموں میں چوکسی اختیار کرنے کی ہدایت دی جبکہ پاکستان کا ایک سابق فوجی سرحد پار کرکے ہندوستان کی سرزمین پر دراندازی کرنے میں کامیاب ہوگیا۔ اس کے ہمراہ 6 سخت گیر دہشت گرد بھی ہیں۔ یہ لوگ پٹھان کوٹ میں ہند ۔ پاک سرحد پار کرکے ہولی کے موقع پر دہلی میں دہشت گرد حملے کرنے کے مقصد سے داخل ہوئے ہیں۔ مرکزی صیانتی محکموں نے اپنی اطلاع میں کہا کہ محمد خورشید عالم عرف جہانگیر پاکستانی فوج کا سابق سپاہی جو بھرتی کرنے والوں میں شامل تھا اور آسام میں جہادی عناصر کی رہنمائی کرچکا تھا تاکہ وہ پاکستان سے ہند ۔ پاک سرحد پار کرکے سرزمین ہند پر داخل ہوں اور 26 فبروری کو پٹھان کوٹ میں حملہ کریں۔ اس گروپ کا منصوبہ تھا کہ ہوٹلوں اور ہاسپٹلوں میں ہولی سے پہلے شہریوں کو ہلاک کریں ۔ صیانتی محکموں نے کہا کہ عالم بارپیٹا میں ستمبر 2015ء میں ایک دینی مدرسہ کا دورہ بھی کرچکا ہے۔ سابق پاکستانی فوجی دینی مدرسہ میں پانچ دن قیام پذیر تھا اس کے بعد وہ بھوٹان کی سرحد سے متصل ضلع چرانگ روانہ ہوگیا۔ عالم نے ایک اور دینی مدرسہ کو ضلع ڈھوبری (آسام) میں اپنے اڈہ کے طور پر استعمال کیا جہاں سے وہ ریاست کے دیگر علاقوں کے دورے کیا کرتا تھا۔ ڈھوبری میں دینی مدرسہ کے ایک ٹیچر نے اسے تمام دفاعی تائید فراہم کی تھی۔ اطلاع کے بموجب فوجی اور اس کے ساتھیوں کی تلاش کی مہم شروع کردی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT