Monday , September 25 2017
Home / جرائم و حادثات / سافٹ ویر انجینئر لڑکی سے دوسری شادی کرنے والا دھوکہ بازار ایس ایس سی فیل گرفتار

سافٹ ویر انجینئر لڑکی سے دوسری شادی کرنے والا دھوکہ بازار ایس ایس سی فیل گرفتار

ملزم کے ساتھ دو ساتھی گرفتار ، ایک مفرور ، ڈی سی پی ساوتھ زون وی ستیہ نارائنا کی پریس کانفرنس
حیدرآباد ۔ /8 جنوری (سیاست نیوز)  دھوکہ دہی کے ذریعہ دوسری شادی کرنے والے دھوکے باز کو ساؤتھ زون پولیس نے آج میڈیا کے روبرو پیش کردیا ۔ ڈپٹی کمشنر پولیس ساؤتھ زون مسٹر وی ستیہ نارائینا نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ 40 سالہ محمد احمد علی ساکن مون راک اپارٹمنٹ مانصاحب ٹینک نے 26 سالہ سافٹ ویئر انجنیئر حفصہ سلیم جو گوگل کی ملازمہ ہے ساکن یاقوت پورہ سے دھوکہ دہی کے ذریعہ شادی کی ۔ انہوں نے بتایا کہ دو سال قبل احمد علی کو اپنے کاروبار میں بھاری نقصان ہوا تھا جس کے سبب اس نے رئیس گھرانے کی لڑکی سے شادی کرکے جوڑے گھوڑے کی رقم کے ذریعہ اپنا قرض ادا کرنے کا منصوبہ تیار کیا تھا ۔ اس سلسلے میں احمد علی نے نور خاں بازار کے ساکن اپنے دوست اعجاز سلطان سے رابطہ قائم کیا اور کاروبار میں نقصان ہونے پر رئیس گھرانے کی لڑکی سے شادی کرانے میں مدد طلب کی ۔ اعجاز نے اسے بتایا کہ اس کے قریبی رشتہ دار لڑکی ہے جس کے والد سعودی عرب میں سینئر منیجر کی حیثیت سے ملازمت کررہے ہیں اس سلسلے میں احمد علی کو اس نے ناگپور کی ایک درگاہ لے گیا جہاں پر حفصہ سلیم اور اس کی والدہ ساجدہ اختر سے ملاقات کی ۔ احمد علی نے خود کو کئی شادی خانوں ، گفٹ سنٹر  اور گرلز و بوائز ہاسٹل کا مالک ہونے کا دعویٰ کیا اور بنجارہ ہلز جیسے پاش علاقے میں اپنا فلیٹ ہونے کا دعویٰ بھی کیا ۔ احمد علی کے جھوٹے دعووں سے ساجدہ اختر اور ان کی بیٹی متاثر ہوگئی اور دھوکے باز نے ماں بیٹی کا اعتماد حاصل کرنے کیلئے تین بیڈروم فلیٹ واقع چراغ علی لین کے فرضی دستاویزات تیار کئے اور یہ دعویٰ کیا کہ یہ ملکیت 1.2 کروڑ کی ہے اور محض 50 لاکھ میں اسے فروخت کرنا چاہتا ہے ۔ ساجدہ اختر نے بطور پیشگی 10 لاکھ روپئے دیئے اور بعد ازاں دیگر کاروبار میں سرمایہ کاری کیلئے مزید 27 لاکھ روپئے حاصل کئے ۔ منصوبہ کے مطابق احمد علی نے اپنے تمام قرض ادا کرلئے اور پرتعیش زندگی کیلئے لکژری کار اور دیگر اشیاء خرید لیا ۔ جھوٹے دعوؤں کے ذریعہ احمد علی نے لڑکی سے اپنے تعلقات قائم رکھے اور بعد ازاں /5 جنوری کو راجیندر نگر میں واقع ایک شادی خانے میں نکاح کیا جہاں پر لڑکی کے بعض رشتہ داروں نے دھوکے باز کی شناخت کرتے ہوئے اسے شادی شدہ ہونے کا پردہ فاش کردیا ۔ ساجد اختر اور حفصہ سلیم نے رین بازار پولیس سے شکایت درج کروائی اور پولیس نے احمد علی کے خلاف دھوکہ دہی کے علاوہ مزید جہیز کی ہراسانی کا ایک مقدمہ درج کرلیا ۔ ڈی سی پی نے بتایا کہ گرفتار دھوکہ باز ایس ایس سی فیل ہے اور وہ تعلیم یافتہ لڑکی کو دھوکہ دیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ اس کیس میں فاروق نگر فلک نما کے سید اکبر علی کو بھی گرفتار کیا گیا ہے جبکہ احمد علی کے دوست اعجاز سلطان کی پولیس کو تلاش ہے ۔

TOPPOPULARRECENT