Wednesday , August 16 2017
Home / شہر کی خبریں / سال 2019 میں کانگریس اقتدار پر کسانوں کے قرضہ جات کی معافی

سال 2019 میں کانگریس اقتدار پر کسانوں کے قرضہ جات کی معافی

خودکشی کرنے والے کسانوں کو ایکس گریشیاء کا مطالبہ ، صدر تلنگانہ پی سی سی اتم کمار ریڈی
حیدرآباد /12 اپریل ( سیاست نیوز ) صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی نے 2019 میں کانگریس کے برسر اقتدار میں آنے کے بعد تمام کسانوں کے قرضے یکمشت میں معاف کردینے کا اعلان کرتے ہوئے ریاست میں خودکشی کرنے والے 3000 کسانوں کے ارکان خاندان میں فی کس 6 لاکھ روپئے ایکس گریشیا فراہم کرنے کا حکومت سے مطالبہ کیا ۔ آج گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کانگریس کے دباؤ میں بالاآخر حکومت نے جی او آر ٹی نمبر 860 جاری کرتے ہوئے کسانوں کی آخری قسط 4000 کروڑ روپئے جاری کرتے ہوئے کسانوں کے قرضہ جات مکمل معاف کردئے ہیں ۔ جس کا کانگریس پارٹی خیرمقدم کرتی ہے اور اس کو عوامی فتح تسلیم کرتی ہے ۔ کیپٹن اتم کمار ریڈی نے کہا کہ ٹی آر ایس کی پلینری اور جلسے عام سے قبل کسانوں کے قرضہ جات معاف کرتے ہوئے چیف منسٹر تلنگانہ اس کو سیاسی مسئلہ بنانے کی کوشش کر رہے ہیں ۔ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی نے ایس سی ایس ٹی ڈیولپمنٹ پلان کے 1000 کروڑ روپئے کو کسانوں کے قرضہ جات معاف کرنے میں استعمال کرنے کی سخت مذمت کرتے ہوئے ایس سی اور ایس ٹی طبقات کی حق تلفی کرنے کا حکومت پر الزام عائد کیا ۔ اس کے علاوہ ایس سی ایس ٹی فنڈز کو مشین بھاگیرتا اسکیم میں بھی منتقل کرنے الزام عائد کیا ۔ انہوں نے کہا کہ 2019 میں کانگریس پارٹی اقتدار میں آئے گی اور یکشمت طریقے سے کسانوںکے تمام قرضہ جات معاف کرے گی ۔ کسانوں کے تمام برقی بقایاجات 2014-15 میں معاف کردیا جانا تھا ۔ تاہم اہم وعدہ کو پورا کرنے میں تقریباً تین سال لگادئے ۔ کیپٹن اتم کمار ریڈی نے کسانوں کے قرضہ جات پر وائیٹ پیپر جاری کرنے کا حکومت سے مطالبہ کیا اور ساتھ ہی بنکرس کا اجلاس طلب کرتے ہوئے تمام بنکوں کی جانب سے کسانوں کو نو ڈیو سرٹیفکیٹس جاری کرنے پر زور دینے کا بھی مطالبہ کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 2014 سے اب تک ریاست میں 3000 کسانوں نے خودکشی کی ہے ۔ حکومت خودکشی کرنے والے کسانوں کے ارکان خاندان کو فی کس 6 لاکھ روپئے ایکس گریشیا فراہم کریں ۔ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی نے کہا کہ قیمتوں میں اضافہ ہونے سے روکنے اور کسانوں کی تیار کردہ کاشت کو اقل ترین قیمت فراہم کرنے کیلئے فراہم کرنے کیلئے چیف منسٹر نے اسمبلی میں 1000 کروڑ روپئے کا خصوصی بجٹ مختص کرنے کا وعدہ کیا تھا جس پر ابھی تک عمل آوری نہیں ہوئی ۔ مرچی کے کسان ریاست میں پریشان ہیں حکومت خود 12 ہزار روپئے فی کنٹل مرچ خریدتے ہوئے کسانوں کو راحت فراہم کریں ۔

TOPPOPULARRECENT