Tuesday , September 26 2017
Home / دنیا / سخت گیر اسلام سے نمٹنے آئی ایس کو شکست دینا ضروری

سخت گیر اسلام سے نمٹنے آئی ایس کو شکست دینا ضروری

روس کی حالیہ سرگرمیاں خطرناک، ٹرمپ انتظامیہ میں سکریٹری آف اسٹیٹ ریکس ٹلرسن کا بیان
واشنگٹن ۔ 11 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) امریکہ کو سخت گیر اسلام کے بارے میں دیانتدار ہونا چاہئے کیونکہ اس کی وجہ سے اقوام کے استحکام اور ان کے شہریوں کی خوشحالی کو سنگین خطرہ لاحق ہے۔ ڈونالڈ ٹرمپ انتظامیہ میں شامل کئے گئے سکریٹری آف اسٹیٹ ریکس ٹلرسن نے آج قانون سازوں کو یہ بات بتائی۔ انہوں نے کہا کہ سخت گیر اسلام کو ناکام بنانے کیلئے سب سے زیادہ اہم کام آئی ایس کو شکست دینا ہے۔ مشرق وسطیٰ اور اس کے اطراف کے علاقوں میں کئی چیلنجس کا سامنا ہے جن پر ہمیں فوری توجہ دینی ضروری ہے۔ انہوں نے سینیٹ امورخارجہ رابطہ کمیٹی کی توثیقی سماعت کے دوران یہ بات کہی۔ ٹلرسن نے کہا کہ علاقہ میں کئی ترجیحی مسائل ہیں لیکن ہمیں آئی ایس کو شکست دینے کی مشن سے لاتعلقی نہیں اختیار کرنی چاہئے کیونکہ جب ہر کام ترجیح بن جاتا ہے تو پھر ایسی صورت میں کوئی ترجیح باقی نہیں رہتی۔ انہوں نے کہا کہ آئی ایس کو شکست مشرق وسطیٰ میں ہماری اولین ترجیح ہونی چاہئے۔ امریکہ کو سخت گیر اسلام کے بارے میں دیانتدار ہونا ضروری ہے۔ اس کی ایک اہم وجہ یہ بھی ہیکہ ہمارے شہریوں میں سخت گیر اسلام اور اس کے نام پر امریکی اور ہمارے دوستوں کے ساتھ جس طرح قاتلانہ کارروائیاں ہورہی ہیں ان پر تشویش پائی جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ طاقتور ڈیجیٹل میڈیا پلیٹ فارم نے آئی ایس، القاعدہ اور دیگر دہشت گرد گروپس کو اپنے زہریلے نظریات پھیلانے کا موقع فراہم کیا۔ یہ نظریات امریکی عوام کے اقدار اور دنیا بھر میں انسانی حقوق اقدار کے تعلق سے عوام میں پائے جانے والے احساسات کے بالکل برعکس ہیں۔ ان گروپس نے اکثر ممالک، تنظیموں اور انفرادی طور پر افراد کو ان کے کاز کا ہمدرد بنایا اور ان کے حوصلے بلند کئے۔ ٹلرسن نے کہا کہ امریکی سرزمین اور اس کے حلیفوں پر دیگر گروپس اور انفرادی طور پر حملہ کی صلاحیتوں کو متاثر کرنے کیلئے ضروری ہیکہ سب سے پہلے آئی ایس کا خاتمہ کیا جائے۔ انہوں نے کہاکہ روس سے بھی خطرہ لاحق ہے اور اس کی حالیہ سرگرمیوں نے امریکی مفادات کو نقصان پہنچایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ روس کے حالیہ اقدامات پر اسے جوابدہ بنایا جانا چاہئے۔

TOPPOPULARRECENT