Tuesday , August 22 2017
Home / ہندوستان / سرحد پارسے مداخلت کاری اور کرپشن کے مسئلہ پر فی الفور توجہ دہانی

سرحد پارسے مداخلت کاری اور کرپشن کے مسئلہ پر فی الفور توجہ دہانی

آسام میں بی جے پی کی کامیابی پر امکانی چیف منسٹر سربانند اسونوال کا عہد

نئی دہلی۔/19مئی، ( سیاست ڈاٹ کام ) آسام میں بی جے پی حکومت کی اولین ترجیح یہ ہوگی کہ غیر قانونی دراندازی کی روک تھام کیلئے ہند۔ بنگلہ دیش سرحدکو مہر بند کردیا جائے۔ سربانندا سونوال جنہوں نے شمال مشرقی ریاست میں پہلی مرتبہ پارٹی کی کامیابی کیلئے انتخابی مہم کی قیادت کی ہے اور انہیں چیف منسٹر بنائے جانے کے امکانات روشن ہیں نے یہ بات کہی۔ انہوں نے بتایا کہ آسام میں 15سالہ کانگریس کے دور حکومت کا خاتمہ اور بی جے پی کی شاندار کامیابی کی قیاس آرائی درست ثابت ہوگئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ غیر قانونی تارکین وطن کے خلاف مہم کے دوران حقیقی ہندوستانی شہریوں کو ہراساں نہیں کیا جائیگا اور ان کے مفادات کا مکمل تحفظ کیا جائے گا چاہے وہ ہندو ہوں یا مسلم ہوں۔ 54سالہ سونوال جو کہ فی الحال مرکزی وزیر اسپورٹس ہیں بتایا کہ دراندازی کی روک تھام کیلئے سب سے پہلے ہند۔ بنگلہ دیش سرحد کو مکمل بند کردیا جائیگا اور مقررہ وقت میں نیشنل رجسٹرار آف سٹیزنس میں حقیقی ہندوستانی شہریوں کے ناموں کی شمولیت کو یقینی بنایا جائیگا اور بی جے پی حکومت کے سامنے یہ دو بڑے چیالنجس ہوں گے۔آسام میں سب سے بڑا مسئلہ سرحد پار سے بنگلہ دیشی باشندوں کی دراندازی ہے۔ انتخابی مہم کے دوران بی جے پی اور اس کی حلیف جماعتوں نے اس مسئلہ سے نمٹنے کا وعدہ کیا ہے۔ 54سالہ سونوال نے کہا کہ ریاست میں کرپشن کا مسئلہ توجہ کا طلبگار ہے عوام چونکہ کانگریس سے مایوس ہوگئے تھے اور اقتدار کی تبدیلی اور اچھے دنوں کے حق میں بی جے پی کو فتح سے ہمکنار کیا ہے اور ہمارے انتخابی اتحاد کو قبولیت کا شرف بخشا ہے اور اب ہمارا یہ فریضہ ہوگا کہ عظیم تر آسام کے سماج کا تحفظ کیا جائے جس میں آسامی، بہاری، مارواڑی، بنگالی، ہندو، مسلم، عیسائی، سکھ شامل ہیں اور مسائل کی یکسوئی کیلئے متحدہ کوشش، متحدہ جدوجہد اور باہم زندگی گذارنے کی ضرورت ہے۔ مرکزی وزیر نے اس نقطہ نظر کو مسترد کردیا کہ چیف منسٹر کے عہدہ کیلئے ان کی امیدواری پر حلیف جماعتوں میں اختلاف پایا جاتا ہے اور کہا کہ ہم سب اتفاق رائے سے کام کریں گے۔ آسام کے اسمبلی انتخابات میں کانگریس اور آل انڈیا یونائٹیڈ ڈیمو کریٹک فرنٹ ( بدر الدین اجمل ) سے مقابلہ کیلئے بی جے پی نے علاقائی جماعتوں کا اتحاد تشکیل دیا اور یہ الزام عائد کیا کہ حریف دونوں جماعتوں نے دراندازوں بالخصوص بنگلہ دیشی مسلمانوں کی تائید کررہے ہیں لیکن اب انتخابات میں فتح کے بعد بظاہر بی جے پی نے اپنے تیور بدل دیئے ہیں اور سماج کے ہر ایک طبقہ کی حفاظت کا عہد کیا ہے۔

ایم ایل سی منورما دیوی کی
درخواست ضمانت مسترد
گیا ۔ 19 ۔ مئی : ( سیاست ڈاٹ کام ) : جیل میں محروس جنتادل متحدہ کی رکن قانون ساز کونسل منورما دیوی جو کہ آدتیہ سچدیو قتل کیس کے اصل ملزم راکی یادو کی والدہ ہیں مقامی عدالت نے آج ان کی درخواست ضمانت کو مسترد کردیا ۔ منورما دیوی کے وکیل نے اس بنیاد پر ضمانت طلب کی کہ ان کے مکان کی تلاشی کے دوران نہ تو وہ نشہ میں تھیں اور نہ ہی شراب نوشی کرتے ہوئے پکڑی گئی تھیں ۔ جب کہ راکی یادو کی تلاشی میں پولیس نے گذشتہ ہفتہ ان کے مکان پر دھاوا کیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT