Thursday , August 17 2017
Home / ہندوستان / سرحد پار سے بلا اشتعال فائرنگ کا سلسلہ جاری پاکستان پر جنگ بندی معاہدہ کی خلاف ورزی کا الزام

سرحد پار سے بلا اشتعال فائرنگ کا سلسلہ جاری پاکستان پر جنگ بندی معاہدہ کی خلاف ورزی کا الزام

نئی دہلی ۔ 11 ۔ اگست : ( سیاست ڈاٹ کام ) : حکومت نے آج لوک سبھا میں بتایا ہے کہ پاکستان نے جاریہ سال 26 جولائی تک جموں و کشمیر میں بین الاقوامی سرحد پر 192 مرتبہ جنگ بندی کی خلاف ورزی کی ہے اور اس طرح کی اشتعال انگیزی پر فی الفور اقدامات کرتے ہوئے موثر جواب دیا گیا ۔ ایوان کو یہ بھی مطلع کیا گیا کہ سرحد پار کی فائرنگ میں ہلاک ہونے والوں کے خاندانوں کو مرکز کی جانب سے 5 لاکھ روپئے معاوضہ ادا کرنے کی تجویز ہے جو کہ ریاستی حکومت کے معاوضہ کے قطع نظر ہوگا ۔ مملکتی وزیر داخلہ ہری بھائی پرتی بھائی نے ایک تحریری جواب میں بتایا کہ 26 جولائی2015  تک جموں و کشمیر میں بین الاقوامی سرحدوں پر جنگ بندی کی خلاف ورزی کے 192 واقعات پیش آتے ہیں جس میں 3 شہری اور ایک بی ایس ایف جوان ہلاک ہوگئے اور 22 افراد زخمی ہوگئے جب کہ 7,110 افراد عارضی طور پر متاثر اور 30 مکانات کو نقصان پہنچا ۔ انہوں نے بتایا کہ گذشتہ سال جنگ بندی کی خلاف ورزی کے 430 واقعات میں 14 افراد بشمول 12 شہری اور 2 بی ایس ایف اہلکار ہلاک ہوگئے جب کہ 2.08 لاکھ افراد متاثر ہوگئے ۔ مرکزی وزیر نے کہا کہ جنگ بندی کی خلاف ورزی کی روک تھام اور عوام کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لیے حکومت نے مختلف اقدامات بشمول بی ایس ایف کی جانب سے فی الفور جوابی کارروائی کی جارہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سفارتی سطح پر ہندوستان یہ اصرار کررہا ہے کہ پاکستان لائن آف کنٹرول کا احترام اور سال 2003 کے اقرار نامہ کی پابندی کرے ۔۔

TOPPOPULARRECENT