Thursday , August 17 2017
Home / جرائم و حادثات / سرقہ کی وارداتوں میں ملوث میاں بیوی گرفتار

سرقہ کی وارداتوں میں ملوث میاں بیوی گرفتار

حیدرآباد ۔ /10 جنوری (سیاست نیوز) سرقہ کی وارداتوں میں ملوث ایک باورچی اور اس کی بیوی کو گولکنڈہ پولیس نے گرفتار کرلیا اور اس کے قبضے سے مسروقہ مال برآمد کرلیا ۔ انسپکٹر گولکنڈہ سید فیاض نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ 30 سالہ بی پربھاکر ساکن زیبا باغ آصف نگر اپنی بیوی 24 سالہ بی شراوانی کی مدد سے حیدرآباد و سائبرآباد کے مختلف علاقوں میں سرقہ کی سنگین وارداتیں انجام دی تھی ۔ انہوں نے بتایا کہ پربھاکر اور شروانی کی شادی 2013 ء میں ہوئی تھی اور پربھاکر جو پیشہ سے باورچی ہے گاندھی ہاسپٹل کی قدیم عمارت کے قریب چلائے جارہے دھابہ میں ملازمت کیا کرتا تھا لیکن 2016 ء میں دھابے کو منہدم کئے جانے کے بعد وہ بیروزگار ہوگیا ۔ آسانی سے روپئے کمانے کی غرض سے پربھاکر نے میڈی پلی علاقہ میں پانچ سرقہ کی وارداتیں انجام دی جس کے نتیجہ میں پولیس نے اسے گرفتار کیا تھا ۔ جیل سے رہا ہونے کے بعد وہ دوبارہ سرگرم ہوگیا اور جاریہ سال جنوری میں میاں بیوی نے ملکاجگری علاقہ میں ایک مکان میں قفل شکنی کے ذریعہ مکان میں داخل ہوکر لیپ ٹاپ اور دیگر قیمتی اشیاء کا سرقہ کیا کرتا تھا ۔گولکنڈہ پولیس نے انہیں آج گرفتار کرلیا اور تحقیقات کے دوران یہ معلوم ہوا کہ ڈسمبر 2016 ء میں پربھاکر اور شراونی نے شیخ پیٹ علاقہ میں مکان میں سرقہ کی واردات میں ملوث ہوتے ہوئے طلائی زیورات ، ایل ای ڈی ٹی وی ، کیمرہ ، موبائیل فون وغیرہ جن کی مالیت 4 لاکھ ہے کا سرقہ کیا تھا اور مسروقہ مال کو جگدیش مارکٹ میں فروخت کردیا تھا ۔ گولکنڈہ پولیس نے گرفتار سارقین کے قبضے سے 12.5 تولے طلائی زیورات ، الیکٹرانک اشیاء اور ایک مسروقہ موٹر سائیکل بھی برآمد کرلی ۔ گرفتار سارقین کے جوڑے کو عدالت میں پیش کرکے جیل بھیج دیا گیا ۔

TOPPOPULARRECENT