Thursday , August 24 2017
Home / Top Stories / سرمایہ کاروں کیلئے مستحکم ٹیکس سسٹم اور سہل منظوریاں

سرمایہ کاروں کیلئے مستحکم ٹیکس سسٹم اور سہل منظوریاں

وزیراعظم مودی کا ’میک اِن انڈیا ویک‘ کی افتتاحی تقریب میں وعدہ ۔ مندوبین کیلئے پُرتکلف عشائیہ
ممبئی ، 13 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) ’میک اِن انڈیا‘ کو اس ملک میں اب تک کی سب سے بڑی برانڈ قرار دیتے ہوئے وزیراعظم نریندر مودی نے آج سرمایہ کاروں سے قابل قیاس اور شفاف ٹیکس کاری نظام ، لائسنس کی اجرائی میں سادگی اور سہل منظوریوں کا وعدہ کیا۔ وہ یہاں ’میک اِن انڈیا ویک‘ کے افتتاح پر سربراہان مملکت، متعدد بزنس قائدین اور بیرونی مندوبین سے خطاب کررہے تھے۔ انھوں نے کہا کہ اس برانڈ نے ادارہ جات، صنعت، افراد اور ذرائع ابلاغ کی توجہ حاصل کرلی ہے۔ یہ ہماری اجتماعی خواہش کی عکاس ہے اور ہمیں اصلاحات کرنے اور اثرپذیری بڑھانے پر مجبور کررہی ہے۔ وزیراعظم مودی نے کہا کہ ایف ڈی آئی کیلئے ہندوستان نہایت کھلے ملکوں میں سے ہے، نیز ایف ڈی آئی کی مشغولیت اس حکومت کے مئی 2014ء میں برسراقتدار آنے کے بعد سے 48 فی صد بڑھ گئی ہے۔ ’’ہم ہندوستان کو مینوفیکچرنگ کا عالمی مرکز بنانا چاہتے ہیں۔ اب بزنس کرنے میں سہولت پر ہمہ جہت توجہ دی جارہی ہے۔ ہندوستان پہلے سے تین Ds یعنی ڈیموکریسی، ڈیموگرافی اور ڈیمانڈ کا حامل ہے ، جس میں ہم نے ایک اور ’ڈی‘ یعنی ڈی ریگولیشن کا اضافہ کردیا ہے۔‘‘ اس موقع پر وزیراعظم مودی نے پہلے ’ٹائم انڈیا‘ ایوارڈز پیش کئے۔ بسٹ اِن کلاس مینوفیکچرنگ ایوارڈ ’ٹاٹا اسٹیل‘ کو دیا گیا جبکہ انوویٹر آف دی ایئر ایوارڈ ’ہیرو موٹوکارپ‘ اور ینگ میکرز آف دی ایئر ایوارڈ ’اجنتا فارما‘ کے یوگیش اور راجیش اگروال کے حصے میں آیا۔ دریں اثناء وزیراعظم نے جنوبی ممبئی کے ٹرف کلب میں لگ بھگ 800 افراد کیلئے زبردست عشائیہ کی میزبانی کی جبکہ مدعوئین میں کئی ملکوں کے سرکردہ سیاست دان، سفارت کار، اور صنعتی قائدین شامل رہے۔

TOPPOPULARRECENT