Sunday , August 20 2017
Home / جرائم و حادثات / سروجنی دیوی آئی ہاسپٹل کے چند ڈاکٹرس کے خلاف کیس درج

سروجنی دیوی آئی ہاسپٹل کے چند ڈاکٹرس کے خلاف کیس درج

سانحہ کی وجوہات کا پتہ چلانے تلنگانہ ڈرگ کنٹرول ایڈمنسٹریشن کے اقدامات
حیدرآباد ۔ 8 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز ) : سروجنی دیوی آئی ہاسپٹل سانحہ میں جاری تحقیقات کے سلسلہ میں جس میں سات مریض ایک آنکھ کی بینائی سے محروم ہوگئے ، تلنگانہ ڈرگ کنٹرول ایڈمنسٹریشن (DCA) نے اس ہاسپٹل سے رنگرس لیکٹیٹ ( آر ایل ) سیلائن کے تین بیاچس سے 48 باٹلس حاصل کئے تاکہ انفیکشن کی وجوہات کا پتہ چلایا جائے ۔ ڈی سی اے کے عہدیداروں کے مطابق ڈی سی اے نے مہاراشٹرا کے ڈی سی اے کو لکھا بھی ہے کہ حسیب فارماسیوٹیکلس کی جانچ کی جائے جو مینوفکچرر ہے اور آر ایل سلیوشن کو سربراہ کیا ہے جس کی وجہ سے اب کہا جارہا ہے کہ سروجنی دیوی آئی ہاسپٹل میں 13 مریض بیکٹریائی انفیکشن سے متاثر ہوئے ۔ ڈی سی اے نے فنگل کنٹمنیشن کی شکایتوں کے بعد کل نیلوفر ہاسپٹل سے بھی RL سلیوشن کے نمونے حاصل کئے تھے ۔ اتفاق سے وہ سلیوشن بھی ناگپور کی فارما کمپنی حسیب فارماسیوٹیکلس ہی نے سربراہ کیا تھا ۔ ایک متاثرہ مریض کے رشتہ دار جتیندر ریڈی کی جانب سے ہمایوں نگر پولیس اسٹیشن میں درج کرائی گئی شکایت کے بعد سروجنی دیوی آئی ہاسپٹل کے چند ڈاکٹرس کے خلاف فوجداری مقدمہ درج کیا گیا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT