Tuesday , August 22 2017
Home / ہندوستان / سرکاری ڈاکٹروں کی خانگی پریکٹس پر پابندی کی سفارش

سرکاری ڈاکٹروں کی خانگی پریکٹس پر پابندی کی سفارش

سرینگر ۔ 10 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) جموں و کشمیر اسمبلی کی ایک کمیٹی نے ریاستی حکومت کو تجویز پیش کی کہ ’’اوقات کار‘‘ کے دوران ڈاکٹروں کی خانگی پراکٹس پر مکمل پابندی اور ریاست میں غیر رجسٹرڈ میڈیکل شاپس اور جنس نامولود بچوں کی جنس کا پتہ چلانے والے غیرقانونی مراکز کو بند کردیا جائے۔ صدرنشین کمیٹی بشیر احمد وار کی زیرقیادت اجلاس میں حکومت کو یہ تجاویز پیش کی گئی جس میں محکمہ صحت و طبابت کے ضابطوں اور قواعد کا جائزہ لیا گیا۔ علاوہ ازیں کمیٹی نے غیرمعیاری ادویات فروخت کرنے والوں کے خلاف قانونی کارروائی اور عوام کو بہتر طبی سہولیات فراہم کرنے کی سفارش کی جبکہ سرکاری ڈاکٹروں کی ’’اوقات کار‘‘ کے دوران خانی پریکٹس پر مکمل امتناع اور مادر رحم میں جنس کا پتہ چلانے والے سنٹروں کو بند کردینے پر زور دیا گیا۔

TOPPOPULARRECENT