Wednesday , August 23 2017
Home / Top Stories / سرینگر میں دن دھاڑے عسکریت پسندوں کے حملے

سرینگر میں دن دھاڑے عسکریت پسندوں کے حملے

SRINAGAR, MAY 23 (UNI):-Jammu and Kashmir Chief Minister Mehbooba Mufti paying floral tributes to jawans, who were killed by suspected miltants in Srinagar on Monday. UNI PHOTO-119U

3 پولیس ملازمین بشمول ایک عہدیدار ہلاک
سرینگر ۔ 23 ۔ مئی : ( سیاست ڈاٹ کام) : جموں و کشمیر کے گرمائی دارالحکومت میں آج عسکریت پسندوں نے تابڑ توڑ حملے کرتے ہوئے 3 پولیس ملازمین بشمول ایک آفیسر کو ہلاک کردیا اور ایک سرویس رائفل لے کر فرار ہوگئے ۔ پہلے حملے میں عسکریت پسندوں نے سرینگر کے علاقہ زیدی بل میں تقریبا 10-45 بجے 2 پولیس ملازمین کو گولی مار دی ۔ پولیس ذرائع نے بتایا کہ یہ واقعہ درگاہ حضرت بل اور سوپر اسپیشلیٹی SKIMS ہاسپٹل کے قریب پیش آیا جہاں پر عسکریت پسندوں نے 2 پولیس اہلکاروں کو قریب سے گولی مار دی ۔ جن کی شناخت اسسٹنٹ سب انسپکٹر غلام محمد اور ہیڈ کانسٹبل نظیر احمد کی حیثیت سے کی گئی ۔ حملہ آوروں کو پکڑنے کے لیے پولیس اور دیگر سیکوریٹی فورس کو متحرک کردیا گیا ہے ۔ دوسرے حملہ میں عسکریت پسندوں نے ایک کانسٹبل محمد صادق کو تینگ پورہ میں پاریم پورہ ۔ حیدرپورہ روڈ پر گولی مار کر ہلاک کردیا وہ صدر نشین جموں و کشمیر پسماندہ طبقات محمد عبداللہ چتوال کے سیکوریٹی گارڈ کی حیثیت سے متعین تھے ۔ عسکریت پسندوں نے مہلوک کانسٹبل سے سرویس رائفل لے کر فرار ہوگئے ۔ شہر سرینگر میں حملوں کا دلیرانہ واقعہ 3 سال بعد پیش آیا ۔ اس طرح کا واقعہ 22 جون 2013 کو پیش آیا تھا ۔ جب کہ ہری سنگھ ہائی اسٹریٹ پر 2 پولیس ملازمین کو گولی مار کر ہلاک کردیا گیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT