Wednesday , September 20 2017
Home / Top Stories / سرینگر کی جامع مسجد میں مسلسل دوسرا جمعہ نماز نہ ہوئی

سرینگر کی جامع مسجد میں مسلسل دوسرا جمعہ نماز نہ ہوئی

سرینگر ، 15 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) کشمیر انتظامیہ نے مسلسل دوسرے جمعہ کو بھی گرمائی دارالحکومت سرینگر کے پائین شہر میں سخت ترین پابندیاں نافذ کرکے نوہٹہ میں واقع تاریخی و مرکزی جامع مسجد میں نماز جمعہ کی ادائیگی ناممکن بنادی۔ پابندیاں ظاہری طور پر لشکر طیبہ کے کشمیر چیف ابو اسماعیل اور اس کے ساتھی چھوٹا قاسم کی ہلاکت کے خلاف احتجاجی مظاہروں یا کسی ناخوشگوار واقعہ کو روکنے کے لئے نافذ کی گئیں۔ پائین شہر میں گذشتہ جمعہ 8 ستمبر کو بھی کرفیو جیسی پابندیاں نافذ کی گئی تھیں جن کے سبب سرینگر کی تاریخی جامع مسجد میں نماز کی ادائیگی نہیں ہوسکی تھی۔کشمیر کی تمام مذہبی جماعتوں نے گذشتہ جمعہ کو برما کے روہنگیا مسلمانوں کیساتھ یوم یکجہتی کے طور پر منانے اور برمی مسلمانوں کے قتل عام کے خلاف صدائے احتجاج بلند کرنے کا اعلان کیا تھا۔ انتظامیہ نے جمعہ کی صبح پائین شہر کے مختلف حصوں میں سخت ترین بندشیں عائد کرکے تاریخی جامع مسجد میں نماز کی ادائیگی مسلسل دوسرے جمعہ کو بھی ناممکن بنادی۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ پائین شہر میں خانیار ، نوہٹہ ، رعنا واری ، مہاراج گنج اور صفہ کدل پولیس سٹیشنوں کے تحت آنے والے علاقوں میں احتیاطی طور پر آج دفعہ 144سی آر پی سی کے تحت پابندیاں عائد کی گئی ہیں۔ تاہم سرکاری دعوے کے برخلاف پائین شہر کے ان علاقوں میں جمعہ کی صبح سے ہی کرفیو جیسا سماں دیکھنے کو آیا۔ سیکورٹی فورسز نے پائین شہر بالخصوص نوہٹہ کی بیشتر سڑکوں کو جمعہ کی صبح ہی سیل کردیا جبکہ ان پر لوگوں کی نقل وحرکت کو روکنے کیلئے بڑی تعداد میں سیکورٹی فورسز اور ریاستی پولیس کے اہلکاروں کی نفری تعینات کی گئی۔ نوہٹہ کے مقامی لوگوں نے بتایا کہ تاریخی جامع مسجد کے دروازوں کو جمعہ کی صبح ہی مقفل کردیا گیا۔ انہوں نے بتایا کہ مسجد میں نماز جمعہ کیلئے اذان دینے کی بھی اجازت نہیں دی گئی۔ مسجد انتظامیہ کمیٹی کے ایک عہدیدار نے بتایا ہم نے فجر کی نماز جامع مسجد کے اندر ہی ادا کی لیکن فجر نماز ادا کرنے کے بعد سیکورٹی فورسز نے جامع مسجد کو بند کردیا۔ اس دوران حریت کانفرنس (ع) چیئرمین میرواعظ مولوی عمر فاروق جو مرکزی جامع مسجد میں ہر جمعہ کو اپنا معمول کا خطبہ دیتے ہیں، کو جمعرات کی شام سے بدستور اپنے گھر میں نظربند رکھا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT