Friday , August 18 2017
Home / کھیل کی خبریں / سری لنکا کی مرلی دھرن کیخلاف آسٹریلیا سے شکایت

سری لنکا کی مرلی دھرن کیخلاف آسٹریلیا سے شکایت

کولمبو ، 25 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) سری لنکن کرکٹ بورڈ نے اپنی ٹیم کے منیجر سے بدتمیزی کرنے پر آسٹریلیا کے کنسلٹنٹ اور سابق عظیم اسپنر متیا مرلی دھرن کے خلاف آسٹریلیائی ٹیم سے شکایت کرتے ہوئے اپنی رپورٹ جمع کرا دی ہے۔ سری لنکا اور آسٹریلیا کے درمیان سری لنکن سرزمین پر تین ٹسٹ میچوں کی سیریز کے پہلے میچ سے قبل مرلی نے سری لنکن ٹیم منیجر چریتھ سنانائیکے سے بدتمیزی کی۔ سری لنکن کرکٹ بورڈ کے صدر تھلنگا سماتھی پالا نے الزام عائد کیا کہ عظیم آف اسپنر نے کولمبو میں پریکٹس پچ کے استعمال پر سری لنکن ٹیم کے منیجر سے بدتمیزی کی۔ انہوں نے صحافیوں کو بتایا کہ مرلی دھرن کا رویہ ناقابل قبول ہے اور ہم یہ بات آسٹریلین ٹیم مینجمنٹ کے علم میں لے آئے ہیں۔ سماتھی پالا نے بتایا کہ ہفتہ کو پالیکلے میں مرلی دھرن نے گراؤنڈ اسٹاف کو ڈرا دھمکا کر پریکٹس کی اجازت طلب کی حالانکہ دونوں ٹیموں کو یہاں پریکٹس کی اجازت نہیں تھی۔ انہوں نے بتایا کہ اس کے بعد وہ ہماری ٹیم کے منیجر سے الجھ گئے اور ان سے بدتمیزی کی۔ سری لنکا کے ہیرو تصور کئے جانے والے مرلی دھرن کو ٹسٹ کرکٹ میں سب سے زیادہ 800وکٹیں حاصل کرنے کا اعزاز حاصل ہے اور ریٹائرمنٹ کے بعد چھ سال گزرنے کے باوجود اُن کا یہ ریکارڈ آج تک قائم و دائم ہے۔ مرلی دھرن کی جانب سے آسٹریلین ٹیم کا کنسلٹنٹ بننے پر متعدد حلقوں نے حیرت کا اظہار کیا تھا کیونکہ 44 سالہ آف اسپنر کو 90ء کی دہائی میں آسٹریلیائی وزیر اعظم جان ہاورڈ نے ’چکر‘ قرار دیا تھا۔ مرلی نے آسٹریلیائی ٹیم کی مدد کرنے کے اپنے فیصلے کا دفاع کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’’میں پیشہ ورانہ کام کر رہا ہوں، میں کوئی غدار نہیں۔ سری لنکا نے میری سرویسز سے فائدہ اٹھانے کی کوشش نہیں کی، لہٰذا میں آسٹریلیا کی مدد کر رہا ہوں جو میری خدمات کے معترف ہیں‘‘۔

TOPPOPULARRECENT