Tuesday , June 27 2017
Home / عرب دنیا / سعودی دہشت گردی قانون پر عاجلانہ نظرثانی ضروری : اقوام متحدہ

سعودی دہشت گردی قانون پر عاجلانہ نظرثانی ضروری : اقوام متحدہ

ریاض ۔ /4 مئی (سیاست ڈاٹ کام)  سعودی عرب کو چاہئیے کہ دہشت گردی کی اپنی تعریف پر عاجلانہ بنیادوں پر نظرثانی کر۔ عدم تشدد کے علم بردار صحافیوں اور انسانی حقوق کارکنوں کو سزائے موت جس قانون کے تحت دی جارہی ہے اس پر فوری نظرثانی ضروری ہے ۔ سعودی عرب کا دورہ کرنے کے بعد اقوام متحدہ کے خصوصی رابطہ کار بین امرسین نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 2014 ء کا انسداد دہشت گردی قانون کئی ناقابل قبول وسیع تعریفیں جرم کی رکھتا ہے جو بین الاقوامی انسانی حقوق کے معیاروں کے متعارف نہیں ہیں ۔ اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے نمائندہ ایمرسن نے انسداد دہشت گردی قانون اور تعزیری تحدیدات کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا کہ پرامن افراد جو اپنے آزادی اظہار ، آزادی مدہب یا آزادی تعلقات سے استفادہ کرتے ہیں انہیں اس قانون کے تحت مجرم اور دہشت گرد قرار دیا جاتا ہے ۔ سعودی عرب کو چاہئیے کہ اس نظام پر آزادانہ نظرثانی کریں  اور ایسے تمام قیدیوں کو فوری معافی دیدیں ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT