Monday , September 25 2017
Home / عرب دنیا / سعودی عرب کے فرماںروا اور وزیر خارجہ امریکہ کے مذاکرات

سعودی عرب کے فرماںروا اور وزیر خارجہ امریکہ کے مذاکرات

جنیوا میں شام اور لیبیا سے اور بروسیلس میں یورپی ممالک کے وزرائے خارجہ سے بات چیت
جدہ۔15مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر خارجہ امریکہ جان کیری نے سعودی عرب کے فرماںروا سلمان بن عبدالعزیزسے آج ملاقات کی ۔ ایک ہفتہ بعد ان کی شام اور لیبیا سے جھڑپوں کے بارے میں بات چیت ہونے والی ہے ۔ سعودی عرب دمشق کی صدر بشارالاسد کی حکومت کا تختہ الٹنے کیلئے کوشش کرنے والے باغیوں کا کلیدی حامی ہے ۔ دیگر حلیف ممالک مصر اور ابوظہبی پہلے ہی مشرقی لیبیا میں انتظامیہ کے حامی بن چکے ہیں جو اب بھی اقوام متحدہ کی تائید رکھتا ہے اور امریکہ کی تائید سے طرابلس میں متحدہ حکومت قائم کرچکا ہے ۔ سعودی عرب کے وزیر خارجہ عادل الجبیر سے بات چیت کے دوران وزیر خارجہ امریکہ جان کیری نے علاقائی مسائل پر تبادلہ خیال کیا ۔ خاص طور پر شام میں ہونے والی تبدیلیوں پر غور کیا گیا ۔ سرکاری خبر رساں ادارہ سعودی پریس ایجنسی کی خبر کے بموجب جان کیری نے کہا کہ وہ مذکور ہیں کہ سعودی عرب امریکہ کے ساتھ تعاون کررہا ہے جس کا عظیم اثر مرتب ہورہا ہے ۔ جان کیری آج دیر گئے بذریعہ طیارہ ویانا روانہ ہوجائیں گے اور کل شام اور لیبیا کے ساتھ بات چیت کریں گے ۔ امکان ہے کہ یہ بات چیت منگل کے دن بھی جاری رہے گی ۔ چہارشنبہ کے دن وہ بذریعہ طیارہ بروسیلس روانہ ہوجائیں گے جہاں ناٹو کے وزرائے خارجہ کا اجلاس اور مذاکرات مقرر ہیں جس میں مغربی حلیف ممالک کو درپیش تمام چیالنجس پر تبادلہ خیال کیا جائے گا ۔ وزیر خارجہ امریکہ کے ترجمان جان کربی نے کہا کہ جان کیری اور اٹلی کے وزیر خارجہ پاؤلو جینٹیلونی لیبیا میں جھڑپوں کے موضوع پر اجلاس کے مشترکہ میزبان ہوں گے ۔ نئی حکومت کو بین الاقوامی تائید ‘ صیانت پر توجہ دیتے ہوئے تبادلہ خیال کیا جائے گا ۔ متحدہ حکومت کئی ماہ تک اقوام متحدہ کی ثالثی سے حریف گروہوں کے درمیان بات چیت کے ذریعہ قائم ہوئی تھی جس کا اہم مقصد دولت اسلامیہ کے خلاف جنگ ہے ۔

TOPPOPULARRECENT