Wednesday , September 27 2017
Home / عرب دنیا / سعودی ملازمین کو گریگورین کلینڈر کے مطابق تنخواہوں کی ادائیگی سے خسارہ کا سامنا

سعودی ملازمین کو گریگورین کلینڈر کے مطابق تنخواہوں کی ادائیگی سے خسارہ کا سامنا

جدہ۔ 3 اگست (سیاست ڈاٹ کام) جدہ میں ملازمین کو اب یہ شکایت پیدا ہوگئی ہے کہ سالانہ طور پر وہ اپنی 15 دنوں کی تنخواہ کا نقصان اٹھا رہے ہیں جبکہ 40 سالہ طویل ملازمت کے دوران 15 ماہ کی تنخواہ کا خسارہ برداشت کرنا پڑ رہا ہے جس کی وجہ یہ بتائی جارہی ہے کہ اکثر کمپنیاں اب ہجری کلینڈر کے مطابق عمل نہیں کررہی ہیں جبکہ ملازمین کی تنخواہوں کی ادائیگی کے لئے گریگورین کلینڈر پر عمل کیا جارہا ہے۔ بعض ماہرین کا کہنا ہے کہ ہجری کلینڈر پر عمل آوری ملازمین کے حق میں بہتر ثابت ہوگی۔ حسین الرقیب جو ایک مالیاتی تجزیہ نگار ہیں، نے کہا کہ گریگورین کلینڈر پر عمل آوری سے ملازمین کو ان کی تنخواہوں میں جو نقصان برداشت کرنا پڑ رہا ہے، اس کی بھرپائی کی جانی چاہئے اور ساتھ ہی ساتھ ہجری کلینڈر کے مطابق ملازمین کی ریٹائرمنٹ کی عمر کو گنا جانا چاہئے۔ اپنی بات جاری رکھتے ہوئے انہوں نے کہا کہ گریگورین کلینڈر سے ملازمین کو رمضان المبارک میں پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے، اگر گریگورین کلینڈر رمضان المبارک کے کلینڈر سے مطابقت نہ رکھتا ہو لہذا نتیجہ یہ ہوتا ہے کہ رمضان المبارک کے دوران ملازمین قرض لینے پر مجبور ہوجاتے ہیں اور کمپنیاں فی ملازم گیارہ دنوں کی تنخواہوں کی بچت کرلیتی ہیں کیونکہ گریگورین کلینڈر 365 دنوں کا ہے جبکہ ہجری سال 354 دنوں کا۔ حکومت نے حالانکہ اپنا بجٹ گریگورین کلینڈر کے مطابق تیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے لیکن اس کے باوجود ملازمین کو تنخواہیں ہجری کلینڈر کے مطابق ادا کی جاتی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT