Tuesday , September 19 2017
Home / جرائم و حادثات / سعیدآباد میں رکشا والے کا قتل

سعیدآباد میں رکشا والے کا قتل

حیدرآباد ۔ /18 اپریل (سیاست نیوز) سعیدآباد کے علاقے ایرہ کنٹہ دھوبی گھاٹ میں ایک رکشاوالے کا بہیمانہ طور پر قتل کرکے اس کی نعش کو شمشان گھاٹ میں پھینک دیا گیا ۔ نعش کی دستیابی سے علاقہ میں سنسنی پھیل گئی اور یہ افواہ گشت کرنے لگی کہ یہ قتل فرقہ وارانہ نوعیت کا ہے ۔ تفصیلات کے بموجب 45 سالہ سید عمید علی ساکن تالاب کٹہ بھوانی نگر کو /16 اپریل کی شب نامعلوم افراد نے دھوبی گھاٹ ایرہ کنٹہ شمشان گھاٹ کے قریب سر پر وزنی پتھر ڈال کر قتل کردیا تھا ۔ کل دوپہر عمید علی کی نعش شمشان گھاٹ سے دستیاب ہونے پر سعیدآباد پولیس کی ٹیم مقام واردات پر پہونچ گئی اور کلوز ٹیم کو طلب کرلیا ۔ نعش کو دواخانہ عثمانیہ کے مردہ خانہ منتقل کرتے ہوئے قتل کیس کا مقدمہ درج کرتے ہوئے تحقیقات کا آغاز کیا گیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ پولیس نے تحقیقات کے دوران یہ پتہ لگایا ہے کہ مقتول نے قتل سے قبل سرورنگر کے سیندھی کمپاؤنڈ میں اپنے دو دوستوں کے ہمراہ شراب نوشی کی تھی اور رات دیر گئے وہ رکشا پر اپنے مکان واپس لوٹ رہا تھا کہ اسے دوستوں نے نشانہ بنایا اور اس کا قتل کردیا ۔ پولیس نے سی سی ٹی وی ریکارڈنگ کی بنیاد پر خاطیوں کا پتہ لگاتے ہوئے انہیں حراست میں لے لیا اور تفتیش کے دوران انہوں نے ارتکاب جرم کیا ہے ۔ اس کیس کی تحقیقاتی عہدیدار مسٹر ناگیشور راؤ نے بتایا کہ قتل کیس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے اور ابتدائی تحقیقات میں یہ معلوم ہوا ہے کہ آپسی رقابت کے نتیجہ میں یہ قتل ہوا ہے اور اس کا فرقہ وارانہ نوعیت سے کوئی تعلق نہیں ہے ۔ مزید تحقیقات جاری ہے۔

TOPPOPULARRECENT