Thursday , August 24 2017
Home / پاکستان / سلمان تاثیر کے قاتل ممتاز قادری کی نظرثانی کی اپیل بھی مسترد

سلمان تاثیر کے قاتل ممتاز قادری کی نظرثانی کی اپیل بھی مسترد

اسلام آباد ۔ 14 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام)  سپریم کورٹ نے گورنر پنجاب سلمان تاثیر کے قتل کے مقدمے میں موت کی سزا پانے والے مجرم ممتاز قادری کی نظرثانی کی اپیل مسترد کر دی ہے۔ عدالت نے نظرثانی کی اپیل پر اپنے فیصلے میں کہا ہے کہ سلمان تاثیر پر توہین مذہب کا کوئی مقدمہ نہیں تھا، جب اْن پر یہ جرم ثابت ہی نہیں ہوا تو پھر گورنر پنجاب کو کیوں قتل کیا گیا؟ جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ نے مجرم ممتاز قادری کی طرف سے نظرثانی کی اپیل کی سماعت کی۔ مجرم کے وکیل اور لاہور ہائی کورٹ کے سابق چیف جسٹس خواجہ محمد شریف نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ اْن کے موکل عاشق رسول ہیں اور اْنھوں نے یہ برداشت نہیں کیا کہ مقتول گورنر توہین مذہب کے قانون کی مخالفت کریں۔ بینچ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ توہین مذہب انسانوں کا بنایا ہوا قانون ہے جس میں بہتری کی گنجائش ہر وقت موجود رہتی ہے۔ اْنھوں نے کہا کہ اس قانون کے بارے میں بات کرنا کسی طور پر بھی توہین مذہب کے زمرے میں نہیں آتا۔ خواجہ محمد شریف کا کہنا تھا کہ چونکہ یہ حساس معاملہ ہے اس لئے سپریم کورٹ کی وسیع تر بنچ تشکیل دی جائے تاکہ اس واقعہ کی تشریح بہتر انداز میں ہوسکے۔

TOPPOPULARRECENT