Saturday , October 21 2017
Home / ہندوستان / سمجھوتہ ایکسپریس دھماکہ کیس: علیگڑھ یونیورسٹی اسکالر کو سپریم کور سے ضمانت حاصل

سمجھوتہ ایکسپریس دھماکہ کیس: علیگڑھ یونیورسٹی اسکالر کو سپریم کور سے ضمانت حاصل

نئی دہلی ۔ 25 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ کو اپنے علیگڑھ مسلم یونیورسٹی کے ایک سابق اسکالر گلزار احمد وانی کی ضمانت آج منظور کرلیا۔ وہ مبینہ طور پر حزب المجاہدین کا ایک کارندہ ہے اور 2000 کے دوران سابرمتی ایکسپریس میں دھماکہ کی سازش کے الزام کے تحت  2001ء سے جیل میں ہے۔ یوم آزادی کے موقع پر مظفرپور تا احمدآباد روانگی کے دوران کانپور کے قریب اس ٹرین میں دھماکہ  ہوگیا تھا جس کے نتیجہ میں 10 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔ چیف جسٹس جے ایس کیہر اور جسٹس ڈی وائی چندراچوڑ نے اس تاثر کا اظہار کیا کہ وانی گذشتہ 16 سال سے قید و بند سے دوچار ہے۔ وہ اپنے خلاف درج کردہ 11 کے منجملہ 9 مقدمات میں بری ہوچکا ہے۔ استغاثہ کے 96 گواہوں کے منجملہ تاحال صرف 20 پر جرح کی جاسکی ہے۔ تمام گواہوں پر 31 اکٹوبر تک جرح مکمل کرلی جائے۔ عدالت عظمیٰ نے گلزار احمد وانی کو ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ اس کے ساتھی اور معاون ملزم 2001ء میں ضمانت پر رہا کئے جاچکے ہیں۔ چنانچہ جرح کا عمل 31 اکٹوبر تک مکمل ہونے یا نہ ہونے سے قطع نظر اس کو یکم ؍ نومبر کو رہا کیا جائے۔

 

سی آر پی ایف کے 25 مہلوک جوان حملے کے وقت لنچ میں مصروف تھے
نئی دہلی 25 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) چھتیس گڑھ کے ضلع سکما میں گزشتہ روز نکسلائیٹوں کی طرف گھات لگاکر کئے گئے حملے میں مہلوک سی آر پی ایف کے 25 جوان پیر کو اس وقت دوپہر کے کھانے میں مصروف تھے جب نکسلائٹوں نے اُنھیں اندھا دھند فائرنگ اور دستی بم حملہ کا نشانہ بنایا تھا۔ سی آر پی ایف کے 99 جوانوں کی ٹیم گزشتہ روز بدکاپل میں چنتہ گنا کو مربوط کرنے والی 5.5 کیلو میٹر طویل سڑک کی ا فتتاحی تقریب کے بعد واپس ہوئے تھے کہ ماؤنوازوں نے دیہاتیوں کی مدد سے ان کے ٹھکانے کا پتہ چلاتے ہوئے 36 جوانوں کو پہلے حملے کا نشانہ بنایا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT