Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / سمرتی ایرانی ‘ دتاتریہ کے خلاف کارروائی کا مطالبہ

سمرتی ایرانی ‘ دتاتریہ کے خلاف کارروائی کا مطالبہ

دلت طالب علم کی خودکشی کے پیچھے مرکزی وزراء پر مقدمہ ضروری :پرکاش امبیڈکر
ناگپور۔24 جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) آر پی آئی لیڈر پرکاش امبیڈکر نے مطالبہ کیا کہ حیدرآباد سنٹرل یونیورسٹی میں دلت طالب علم کی خودکشی کے لئے مرکزی وزراء سمرتی ایرانی اور بنڈارو دتاتریہ کے علاوہ وائس چانسلر اپا راؤ کے خلاف کارروائی کی جائے ۔ ان تینوں کو اس کیس میں ماخوذ کرکے مقدمہ چلایا جائے ۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ سنٹرل یونیورسٹی ایک خودمختار ادارہ ہے اور وزیر فروغ انسانی وسائل کو اس یونیورسٹی پر کنٹرول حاصل کرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔ وزیر کی حیثیت سے انہوں نے یونیورسٹی کے وائس چانسلر کو متعدد مکتوب لکھے اور پانچ دلت اسکالرس کے خلاف کارروائی کرنے پر زور دیا ۔ سمرتی ایرانی نے واضح طور پر اپنے بیان میں یہ تسلیم کیا ہے کہ انہوں نے یونیورسٹی کے وائس چانسلر کو مکتوب لکھے تھے ۔ لہذا طلبہ کے خلاف کارروائی کرنے میں ملوث تمام لوگوں کے خلاف کارروائی ہونی چاہیئے ۔ دلت لیڈر پرکاش امبیڈکر نے طالب علم روہت ویمولا اور امبیڈکر اسٹوڈنٹس اسوسی ایشن کی مدافعت کی جس نے 1993ممبئی بم دھماکوں کے ملزم یعقوب میمن کی پھانسی کے خلاف احتجاج کیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT