Wednesday , August 16 2017
Home / ہندوستان / سپریم کورٹ کالجیم میں حکومت کی درخواست مسترد

سپریم کورٹ کالجیم میں حکومت کی درخواست مسترد

کیا مرکز بی جے پی وکلاء کو ہائیکورٹ کے جج بناناچاہتاہے : کجریوال
نئی دہلی ۔14 اگست ( سیاست ڈاٹ کام ) سپریم کورٹ کی کالجیم امکان ہے کہ اپنا اعتراض حکومت کی بعض تجاویز بشمول جج کے عہدہ پر تقرر کے کسی امیدوار کے حق کو مسترد کردینے کا اختیار اور جانچ کی کمیٹی میں درخواستوں کا تخمینہ کرنے کیلئے شمولیت کی درخواستوں کو ایک بار پھر مسترد کردے گی ۔ ایسے اشارہ مل رہے ہیں کہ چیف جسٹس آف انڈیا کی زیرصدارت کالجیم جس میں 4سینئر ججس بطور ارکان شامل ہیں ۔ حکومت کی ان درخواستوں کو مسترد کردیں گے ۔ گذشتہ مئی میں کالجیم نے متفقہ طور پر ان درخواستوں کو مسترد کردیا تھا ۔ دریں اثناء چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال نے کہا کہ آخر مرکز اُن ناموں کی منظوری کیوں نہیں دے رہا ہے جن کی سفارش سپریم کورٹ کے کالجیم نے دی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کیا مرکز چاہتا ہے کہ بی جے پی وکلاء کو ہائیکورٹ کے ججس مقرر کیا جائے ۔ان کے تبصرے سپریم کورٹ سے مرکزی حکومت کے دوبارہ رجوع ہونے کے پس منظر میں اہمیت رکھتے ہیں ۔ مرکزی حکومت نے چیف جسٹس اور ہائیکورٹ کے ججس کو تقررات اور تبادلے مرکزی حکومت کے دائرہ کار میں شامل کرنے کی سفارش کی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT