Monday , September 25 2017
Home / شہر کی خبریں / سکندرآباد پریڈگراؤنڈ کی اراضی حکومت تلنگانہ کے حوالے کرنے مرکز کا اتفاق

سکندرآباد پریڈگراؤنڈ کی اراضی حکومت تلنگانہ کے حوالے کرنے مرکز کا اتفاق

چیف منسٹر کے سی آر کی جانب سے گورنر کی مؤثر نمائندگی۔ سکریٹریٹ کی تعمیر کیلئے راہ ہموار

حیدرآباد 18 مئی (سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ و آندھراپردیش کے مشترکہ گورنر مسٹر ای ایس ایل نرسمہن جنھوں نے 17 مئی کو دہلی کے دورے پر روانہ ہوئے تھے، اپنے مقررہ پروگرام کے مطابق آج شام حیدرآباد واپس ہونے والے تھے لیکن ناگزیر وجوہات کی بناء آج دہلی میں ہی شب بسری کے بعد کل 19 مئی کو حیدرآباد واپس ہوں گے۔ گورنر نے اپنے گزشتہ دورہ دہلی کے موقع پر چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ کی خواہش پر سکندرآباد پریڈ گراؤنڈ کی اراضی حکومت تلنگانہ کے حوالے کرنے سے متعلق وزیراعظم کو چیف منسٹر کے تحریر کردہ مکتوب کے تعلق سے توجہ مبذول کروائی تھی اور محض گورنر ای ایس ایل نرسمہن کی خصوصی دلچسپی کے نتیجہ میں مرکزی حکومت نے سکندرآباد پریڈ گراؤنڈ کی اراضی حکومت تلنگانہ کے حوالہ کرنے سے اصولی طور پر اتفاق کرلیا ہے۔ باوثوق ذرائع نے بتایا کہ مرکزی وزیر دفاع ارون جیٹلی کی صدارت میں گزشتہ روز دہلی میں منعقدہ ایک اجلاس میں سکندرآباد پریڈ گراؤنڈ اراضی کے مسئلہ پر تفصیلی غور و خوض کیا گیا اور اجلاس میں متفقہ طور پر اس بات کا فیصلہ کیا گیا کہ سکندرآباد پریڈ گراؤنڈ کی اراضی چیف منسٹر اور گورنر ای ایس ایل نرسمہن کی خواہش کے مطابق حکومت تلنگانہ کے حوالہ کی جائے تاکہ حکومت تلنگانہ اس اراضی پر ریاستی سکریٹریٹ کی عمارت تعمیر کرسکے۔ بتایا جاتا ہے کہ سکندرآباد پریڈ گراؤنڈ کی اراضی حاصل کرنے حکومت تلنگانہ کسی اور قریبی مقام پر 150 ایکر اراضی وزارت دفاع کو فراہم کرنے سے اتفاق کیا ہے۔ سمجھا جاتا ہے کہ وزارت دفاع کو حکومت تلنگانہ کی جانب سے اراضی فراہم کرنے کے فوری بعد اس اراضی کو پریڈ گراؤنڈ کے قابل بنانے کے بعد ہی سکندرآباد پریڈ گراؤنڈ کی اراضی وزارت دفاع کی جانب سے حکومت تلنگانہ کے حوالے کی جائے گی۔ گورنر ای ایس ایل نرسمہن نے گزشتہ روز مرکزی وزیر دفاع ارون جیٹلی کو وزارت دفاع کے اعلیٰ عہدیداروں کے ساتھ منعقد ہوئے اجلاس سے قبل توجہ دلائی تھی جس کی روشنی میں اراضی حکومت تلنگانہ کے حوالہ کرنے سے متعلق فیصلہ کرنے میں مدد حاصل ہوگی۔ گورنر نے اپنے قیام دہلی کے دوران صدرجمہوریہ ہند پرنب مکرجی سے ملاقات کی۔ بتایا جاتا ہے کہ دونوں ریاستوں تلنگانہ اور آندھراپردیش میں موجودہ حالات پر مبنی انتہائی خفیہ انداز میں مرتب کردہ رپورٹ صدرجمہوریہ ہند کو پیش کی ہے کیوں کہ بتایا جاتا ہے کہ عموماً ہمیشہ مختلف رپورٹس راج بھون کے اعلیٰ عہدیداروں کے ذریعہ ہی تیار کروائی جاتی ہے۔ لیکن اس مرتبہ صدرجمہوریہ ہند پرنب مکرجی کو پیش کردہ دونوں ریاستوں سے متعلق رپورٹ خود گورنر نے مرتب کرلی تھی۔ اسی ذرائع نے بتایا کہ گورنر ای ایس ایل نرسمہن نے اپنے قیام دہلی کے دوران وزیراعظم مودی کے علاوہ مختلف مرکزی قائدین بشمول مرکزی وزیرداخلہ سے بھی ملاقات کرکے دونوں ریاستوں کی صورتحال پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔

TOPPOPULARRECENT