Monday , August 21 2017
Home / شہر کی خبریں / سیاحوں کے لیے ’ گھریلو رہائش ‘ اسکیم کا فروغ

سیاحوں کے لیے ’ گھریلو رہائش ‘ اسکیم کا فروغ

سیاحوں کی دلچسپی عوام کے لیے منفعت بخش ،محکمہ سیاحت سے عوام کے لیے منفرد پیشکش
حیدرآباد۔7اگسٹ (سیاست نیوز ) سیاحوں کو تہذیب سے واقف کروانے اور گھریلو رہن سہن فراہم کرنے کے عالمی رجحان کی دوڑ میں ریاست تلنگانہ بھی شامل ہونے کی کوششوں کا آغاز کر چکی ہے۔ دونوں شہروں کے علاوہ ریاست کے مختلف اضلاع میں ایسے مکان مالکین جو سیاحوں کو رہائش فراہم کرتے ہوئے ان کے لئے بہترین انتظامات کر سکتے ہیں وہ ریاستی حکومت کے محکمۂ سیاحت کی جانب سے شروع کردہ اسکیم میں رجسٹریشن کے ذریعہ زبردست مالی منفعت حاصل کر سکتے ہیں۔ عالمی سطح پر سیاحوں کو مقامی طرز زندگی اور تہذیب سے واقف کروانے کیلئے ہوٹل کے بجائے ’’گھریلو رہائش ‘‘ کو فروغ دیا جانے لگا ہے اور سیاح اس انوکھے تجربہ سے استفادہ کرنے میں دلچسپی بھی دکھا رہے ہیں۔ تلنگانہ کے محکمۂ سیاحت کی جانب سے شروع کردہ اس منصوبہ سے استفادہ کرنے کیلئے مہمان سیاحوں کی مہمان نوازی کے خواہشمند مکان مالکین اپنی مکمل تفصیلات محکمۂ سیاحت کی ویب سائٹ پر موجود فارم میں پر کرتے ہوئے داخل کر سکتے ہیں اور ان مکان مالکین کو سیاح کی آمد اور ان کی رہائش کیلئے محکمۂ سیاحت کی جانب سے مطلع کیا جاتا رہے گا۔ عالمی سطح پر معروف حیدرآبادی مہمان نوازی کو پیش نظر رکھتے ہوئے محکمۂ سیاحت کی جانب سے یہ اسکیم شروع کی گئی ہے اور سابق ریاست آندھرا پردیش میں فلک نما‘ چارمینار‘ چومحلہ‘ سالار جنگ میوزیم کے قریب کے جائیداد مالکین کیلئے یہ اسکیم موجود تھی اور اس اسکیم کا بنیادی مقصد چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ کی ترقی تھا لیکن اس وقت اس اسکیم کی اتنی تشہیر نہیں ہو پائی تھی اور نہ ہی اسکیم کو پذیرائی حاصل ہوئی تھی لیکن اب محکمۂ سیاحت کی جانب سے اس منصوبہ کو قابل عمل بنانے کیلئے عوام میں شعور اجاگر کیا جا رہا ہے تا کہ شہری اس اسکیم سے استفادہ کرتے ہوئے گھر بیٹھے آمدنی حاصل کرنے کے اہل بن سکیں۔ اسکیم کے شرائط میں یہ بات واضح ہے کہ ایسی جائیدادوں کا ہی اس اسکیم میں اندراج کیا جائے گا جن جائیدادوں میں مالک مکان خود رہائش پذیر ہوں اور مہمان سیاحوں کی مہمان نوازی کرنے کیلئے راضی ہوں۔ مالکین مکان ضروری دستاویزات کے ساتھ محکمۂ سیاحت سے رجوع ہوتے ہوئے اپنی جانب سے فراہم کی جانے والی رہائش اور خدمات کے متعلق اپنی خودی سے فیس یا کرایہ طئے کرنے کے مجاز ہیں اور سیاح ان کی فیس اور خدمات کے مطابق ادائیگی کرتے ہوئے ان کے مہمان بنیں گے۔ دونوں شہروں میں اس اسکیم سے سیاحتی مقامات کے قریب رہنے والے شہریوں کو زبر دست فائدہ حاصل ہو سکتا ہے کیونکہ سیاحوں کی دلچسپی تاریخی مقامات سے ہوتی ہے اور بیرونی سیاح کی جانب سے تہذیب و تمدن کے علاوہ مقامی اشیائے خورد و نوش پر توجہ مرکوز کی جاتی ہے۔ گھریلو رہائش فراہم کرنے کے خواہشمند حضرات اپنے طور پر ان سیاحوں کیلئے گھریلو پکوان کے ذریعہ انہیں متاثر کر سکتے ہیں۔ یوروپی ممالک کے علاوہ بعض خلیجی ممالک میں موجود اس سہولت سے سیاح استفادہ کرتے ہوئے ان کی تشہیر کرتے ہیں اور ان کے گھر میں رہائش کے تجربہ کے تذکرے کرتے ہوئے دیگر سیاحوں کو ان گھروں میں قیام کی سفارش کرتے ہیں جن گھروں میں وہ قیام کرچکے ہیں اس طرح رجسٹرڈ گھروں کی تشہیر بھی ہونے لگتی ہے۔حکومت تلنگانہ کے محکمۂ سیاحت کی جانب سے شروع کردہ اس اسکیم سے پرانے شہر کے مکین زبر دست استفادہ کرسکتے ہیں سابق میں جو اسکیم تھی اس میں صرف ان مکانات کو شامل کیا جا رہا تھا جو قدیم طرز تعمیر کے خوبصورت مکانات تھے لیکن اب جو اسکیم شروع کی گئی ہے اس میں کشادہ گھروں کو شامل کیا جا رہا ہے جہاں گھر کے افراد کے علاوہ مہمانوں کی رہائش کی گنجائش موجود ہے۔اس اسکیم سے استفادہ کے خواہشمندمحکمۂ سیاحت کی ویب سائٹ www.telanganatourism.gov.in پر تفصیلات کا مشاہدہ کر سکتے ہیں علاوہ ازیں مزید تفصیلات کیلئے فون نمبرات 9440816065,9440816068پر ربط پیدا کرتے ہوئے متعلقہ عہدیداروں سے بات کی جا سکتی ہے۔مکان مالکین کو اس اسکیم میں رجسٹرڈ کروانے کیلئے محکمۂ سیاحت کی جانب سے مختص کردہ فیس ادا کرنی ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT