Friday , August 18 2017
Home / شہر کی خبریں / سیاست صرف اخبار ہی نہیں بلکہ سماجی و فلاحی تحریک میں تبدیل

سیاست صرف اخبار ہی نہیں بلکہ سماجی و فلاحی تحریک میں تبدیل

سیاست کوکری کلاسیس میں شیف جمال اور شیف آکاش کے پکوان کا مظاہرہ و خطاب
حیدرآباد ۔ 24 ۔ اگست : ( سیاست نیوز) : ادارہ سیاست ، آئی ٹی سی گرانڈ کاکتیہ اور فریڈم برآن آئیل کے تعاون سے آج دوسرے روز سیاست کوکری کلاس جاری رہیں ۔ خواجہ منشن فنکشن ہال میں خواتین کی بڑی تعداد نے ان کلاسیس سے استفادہ کیا ۔ ماہر پکوان ماسٹر شیف جمال ، شیف آکاش اسٹانل ، شیف پردیپ کے ہاتھوں بنائے گئے پکوان کی سراہنا کی گئی ۔ اس موقع پر آصف جاہی دور کے پکوان پر مشتمل کتاب کی قیمت کو نصف قیمت پر ن کلاسیس میں فروختگی کا اعلان کیا گیا جو آج کی آخری کلاسیس میں فروخت کے لیے رکھی جائے گی ۔ واضح رہے کہ اس ضخیم کتاب میں آصفجاہی پکوان ، بریانی اور دیگر ڈشس کی تفصیل سے ترکیبیں ہیں ۔ 23 مئی جو کہ کوکری کلاس کا پہلا دن تھا خواتین طالبات کی بڑی تعداد نے فریڈم رئیس برآن آئیل کے فیس بک پر لائیک کیا جس پر فریڈم رئیس برآن آئیل نے قرعہ نکالا جنہیں آج ماسٹر شیف ایگریٹو آئی ٹی سی گرانڈ کاکتیہ شیف پل ترونا اور سریش ( فریڈم آئیل ) کے ہاتھوں محترمہ محمدی بیگم ( جہاں نما ) ، محترمہ زینت النساء بیگم ( بالا نگر ) ، محترمہ فاطمہ شیرین ( ہمایوں نگر اور محترمہ آمنہ احمد ( مانصاحب ٹینک ) کو فریڈم رئیس برآن آئیل کین تحفتاً دئیے گئے ۔ اس کے علاوہ محترمہ رتنا چوٹرانی سینئیر رپورٹر سیاست نے درمیان میں خواتین سے معلوماتی سوالات کرتی رہیں جن کے صحیح جوابات پر محترمہ کفیل النساء ( مغل پورہ ) اور دوسری خواتین کو تحفے دئیے گئے ۔

 

ایگزیٹو شیف پال نرونا نے گرانڈ کاکتیہ اور سیاست کی جانب سے ہونے والی ان پکوان کلاس پر خوشنودی کا اظہار کیا اور کہا کہ اگر اس طرح خواتین و لڑکیاں ہر میدان میں اپنے قدم آگے بڑھاتے رہیں گے تو وہ اس ملک کا ہی نہیں بلکہ اپنے خاندان کا نام روشن کرسکیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ انسان ہمیشہ اپنی صحت کو بنائے رکھنے کے لیے فکر مند رہتا ہے اور چاہتا ہے کہ اسے مقوی اور تازہ غذا ملتی رہے ۔ انہوں نے خواتین کی دلچسپی پر اطمینان کا اظہار کیا اور کہا کہ سیاست کا تعاون اسی طرح پکوان کے میدان میں جاری رہے گا تو مستقبل میں تمام خواتین اس میدان میں مہارت پیدا کرسکیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ سیاست صرف ایک اخبار نہیں بلکہ سماجی و فلاحی ادارہ کی حیثیت اختیار کرچکا ہے ۔ جس کی کارکردگی کو دیکھ کر بڑی مسرت ہوا کرتی ہے ۔ آج کے اس کوکری میں شیف جمال اور شیف آکاش اسٹانل ( بنگلور ) نے ڈشس ٹراگنس سوپ ، کمپوچکنس ، مان چاؤ ، ویجیٹبل نوڈلس ، پرانس سومائی ، اسلائچ دم ویتھ آفین کمیونس جس میں پیاز اور زیرہ ملایا جاتا ہے کے علاوہ اٹلی کھانوں کے ڈشس کا طریقہ بھی بتایا گیا ۔ جن میں ابرجن تھارتھیلیا ، تیز اینڈ نیوسٹون ، اسپگنا اور دیگر سالنوں کے اقسام بتائے گئے ۔ ان شیفس نے کہا کہ ان دنوں حیدرآباد میں بھی اٹلی طرز پر ہونے والے پکوان کی بڑی مانگ ہوتی جارہی ہے اور ان ڈشس کی خاص بات یہ ہے کہ وہ زیادہ دیر تک گرم بھی رہتی ہے ۔ آج شیف نے اٹلی کی ایک اور ڈش ’ برگ کرسڈڈفش ‘ جو ثابت مچھلی پر مشتمل ہے اس کو لے کر تیار کی جس میں مختلف مصالحہ جات لگاتے ہوئے دھیمی آگ پر رکھا جس کی وجہ سے یہ ڈش مزہ دار ہوگئی ۔ اور جس کی بو چاروں طرف پھیل چکی ۔ اس پروگرام میں اٹلی کی ایک اور ڈش Abagina Jartelient جو فاسطہ سے تیار کی جاتی ہے بنائی گئی ۔ اور ان ڈشس کا خواتین نے مزہ لیا اور بڑی مسرور دکھائی دے رہی تھیں ۔ آج پکوان کلاس کے دوسرے روز محمد اسماعیل بزنس پرموٹ منیجر ، محمد نصیر احمد ، شیخ نظام الدین لئیق ، فہیم انصاری اور دیگر اسٹاف نے حصہ لیا ۔ محترمہ رتنا چوٹرانی سینئیر رپورٹر سیاست نے شیفس کا خواتین و طالبات کا خیر مقدم کیا اور درمیان میں بہت سارے پکوان کے فوائد سے واقف کروایا ۔۔

TOPPOPULARRECENT