Sunday , August 20 2017
Home / شہر کی خبریں / سیاست کی تحریک کا اثر- حصول تحفظات کیلئے مسلم طلباء و نوجوانوں کی پُرجوش پیش قدمی

سیاست کی تحریک کا اثر- حصول تحفظات کیلئے مسلم طلباء و نوجوانوں کی پُرجوش پیش قدمی

چیف منسٹر سے وعدہ پورا کرنے کی اپیل، اضلاع میں عہدیداروں کو یادداشت
حیدرآباد۔/9ستمبر، ( سیاست نیوز) تلنگانہ کا مسلم نوجوان طبقہ اپنی تمام تر ترجیحات میں تعلیم اور بہتر روزگار کو اولین ترجیح دے رہا ہے اور اپنے اور قوم کے مستقبل کو روشن بنانے کیلئے وہ کسی بھی موقع کو گنوانا نہیں چاہتا۔ تلنگانہ میں مسلمانوں کو 12فیصد تحفظات کی فراہمی کیلئے روز نامہ سیاست کی جانب سے شروع کردہ تحریک پر نوجوانوں کا زبردست ردعمل حاصل ہورہا ہے۔دل میں جذبہ لئے حسرت بھری نگاہوں سے سرشار پرجوش انداز میں نوجوان طبقہ نے ضلع عادل آباد کے نرمل، ضلع میدک کے جوگی پیٹ اور نیالکل، ضلع رنگاریڈی کے راجندر نگر منڈل میں یادداشتیں پیش کی گئیں۔ روزنامہ سیاست میں شائع فارمیٹ کو یادداشت میں تبدیل کرتے ہوئے سیاسی جماعتوں، ملی و مذہبی اور رضاکار تنظیموں سے وابستہ افراد نے تحصیلداروں اور آر ڈی اوز کو 12فیصد مسلم تحفظات پر عمل آوری اور بی سی کمیشن کی سفارش پر زور دیا۔ مسلم نوجوان طبقہ کا کہنا ہے کہ ہمارے بہتر مستقبل اور قوم کے روشن مستقبل کیلئے 12فیصد تحفظات کے وعدہ پر فوری عمل کیا جانا چاہیئے۔ مسلم نوجوان 12فیصد تحفظات کے مسئلہ پر پیش پیش دکھائی دے رہے ہیں اور یہ بتانے کی کوشش کررہے ہیں کہ 12فیصد تحفظات ہمارا حق ہے، یہ کوئی رعایت یا رحم کی درخواست نہیں بلکہ ریاست کی تشکیل کے بعد عمل میں لائے گئے انتخابات کے دوران موجودہ چیف منسٹر نے مسلمانوں کو 12فیصد تحفظات فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا اور کے چندر شیکھر راؤ چیف منسٹر تلنگانہ کے اس اعلان پر مسلمانوں نے اپنی بھرپور تائید ٹی آر ایس کے حق میں دے کر یہ واضح کردیا تھا کہ وہ ایک سیکولر اور ہمدرد قائد و جماعت کی حمایت کرتے ہیں تاہم اب وعدہ پر عمل آوری میں تاخیر سے تلنگانہ کا مسلمان تشویش کا شکار ہیں۔ اضلاع کے مختلف مسلم نوجوانوں نے وعدہ پر عمل آوری میں تاخیر اور دوسری طرف ملازمتوں کے لئے اعلامیہ کی اجرائی پر تشویش کا اظہار کیا اور ملازمتوں کے موقع سے محرومی کے خوف کو ظاہر کرتے ہوئے چیف منسٹر سے اپنے وعدہ کو پورا کرنے کی اپیل کی۔مسلم قوم نے تلنگانہ بی سی کمیشن کے ذریعہ 12فیصد مسلم تحفظات کی سفارش حاصل کرتے ہوئے تحفظات کو یقینی بنانے کا مطالبہ کیا۔ راجندر نگر ضلع رنگاریڈی میں 12فیصد مسلم تحفظات کو یقینی بنانے کیلئے بی سی کمیشن کی سفارش اور چیف منسٹر سے اپنا وعدہ پورا کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے مسلمانوں نے آر ڈی او کو ایک یادداشت پیش کی۔ ٹی آر ایس قائدین میرا بیگم، محمد مزمل، خالد، محمد بصیر، اشفاق، وحید صدر عطا پور، اسحاق، اقبال، کریم، پرفول کمارپاریکر کرسچین میناریٹی حیدر گوڑہ و دیگر موجود تھے۔ حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ 12فیصد مسلم تحفظات کو یقینی بنائیں۔ان تمام نے مسلمانوں کو تحفظات کیلئے تحریک شروع کرنے پر ایڈیٹر ’سیاست‘ جناب زاہد علی خاں سے اظہار تشکر کیا۔

TOPPOPULARRECENT