Thursday , October 19 2017
Home / شہر کی خبریں / سیاست کی سماجی، فلاحی، تعلیمی اور دینی خدمات کو خراج

سیاست کی سماجی، فلاحی، تعلیمی اور دینی خدمات کو خراج

دوبہ دو پروگرام پر ایم ڈی ایف کا مشاورتی اجلاس، رائے مشورے، پروگرام کو کامیاب بنانے کا عزم

حیدرآباد ۔ 27 مئی (دکن نیوز) مائناریٹیز ڈیولپمنٹ فورم (ایم ڈی ایف) کی ایک نشست فورم کے دفتر احاطہ روزنامہ سیاست (عابڈس) میں منعقد ہوئی، جس کی صدارت ایم اے قدیر کارگذار صدر فورم نے کی۔ اس نشست میں 29 مئی اتوار کو منعقد شدنی 61 ویں دوبہ دو ملاقات پروگرام جوکہ رائل ریجنسی گارڈن روبرو پٹرول پمپ آصف نگر کو کامیابی سے ہمکنار کرنے اور والدین و سرپرستوں کی سہولیات کے ضمن میں غوروخوض کیا گیا اور ساتھ ہی اب تک جتنے بھی دوبہ دو ملاقات پروگرام شہر میں منعقد ہوکر کامیابی کے منازل طئے کئے، اس پر بھی گفت و شنید ہوئی۔ بتایا گیا کہ کسی بھی مقصد کو حاصل کرنے کیلئے محنت، جستجو، لگن سے ہی کسی بھی کام میں کامیابی حاصل کی جاسکتی ہے۔ نشست میں کونسلرس، والینٹرس پر زور دیا گیا کہ وہ اپنے میں مزید مستعدی اور دلجوئی، خدمت خلق کا جذبہ و مظاہرہ پیدا کریں تاکہ آئندہ ہونے والے سیاست اور ایم ڈی ایف کے فلاحی، سماجی کاموں کو مستحکم انداز سے کیا جاسکے۔ اس نشست میں فورم کی جانب سے منعقد ہونے والے دوبہ دو ملاقات پروگراموں میں مختلف اراکین نے اپنی اپنی رائے کا اظہار کیا۔ جناب ایم اے قدیر نے سیاست کی سماجی و فلاحی کاموں کی سراہنا کی اور کہا کہ سیاست ایک  اخبار ہی نہیں بلکہ ایک تحریک ہے جس کے ذریعہ کئے جانے والے کاموں کے اثرات ملک گیر سطح اور عالمی سطح پر پڑ رہے ہیں۔ اس کیلئے انہوں نے جناب زاہد علی خان  ایڈیٹر سیاست، جناب ظہیرالیدن علی خان منیجنگ ایڈیٹر سیاست، جناب عامر علی خان نیوز ایڈیٹر سیاست کی مساعی کی قدر کی اور ان کی دلچسپی کی وجہ سے ہم کو یہ فلاحی و سماجی خدمات کا حوصلہ ملا ہے۔ ارکان فورم اور کارکنوں نے بتایا کہ جو مرد و خواتین سیاست اور ایم ڈی ایف کی سماجی کاموں میں شرکت کررہے ہیں، ان کا نصب العین صرف و صرف خدمت خلق ہی رہا ہے۔ واضح رہے کہ ایم ڈی ایف کے زیراہتمام صرف لڑکے و لڑکیوں کو رشتہ ازدواج سے منسلک کرنا ہی مقصد نہیں ہے بلکہ فورم کے ذریعہ میڈیکل کیمپ، آپسی تنازعات کی یکسوئی اور کونسلنگ بھی ہے۔ اس موقع پر الیاس باشاہ، احمد صدیقی مکیش، محمد نصراللہ خان، سید ناظم الدین، خدیجہ سلطانہ، ڈاکٹر دردانہ، لطیف النساء، محمد احمد، ایم اے واحد، سید اصغر حسین، صالح بن عبداللہ باحاذق، سیدہ محمدی، ڈاکٹر محمد ناظم علی، رفیعہ سلطانہ ثانیہ، سعیدہ سلطانہ، امتیاز ترنم، مہرالنساء، عابدہ بیگم، شبانہ نعیم، آمنہ فاطمہ اور دیگر نے شرکت کی۔ قاری الیاس باشاہ کی قرأت سے میٹنگ کا آغاز ہوا۔ احمد صدیقی مکیش نے کارروائی چلائی اور مشورے بھی دیئے۔

TOPPOPULARRECENT