Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / سیاست کی ہیلپ لائن سے 400 درخواستوں کا ادخال

سیاست کی ہیلپ لائن سے 400 درخواستوں کا ادخال

حیدرآباد ۔ /21 جولائی (سیاست نیوز) ادارہ سیاست کے زیراہتمام ہیلپ لائن کے ذریعہ تاحال تقریباً 400 درخواستیں بیرون ملک تعلیم کیلئے سرکاری گرانٹ کی منظوری کیلئے داخل کی جاچکی ہیں ۔ سیاست ہیلپ لائن کے ذریعہ درخواست گزاروں کے اسنادات کی تنقیح کے علاوہ آن لائن درخواستوں کے ادخال کی مفت خدمات کا سلسلہ اب بھی جاری ہے ۔ حکومت نے بیرون ملک تعلیم کے حصول کیلئے اقلیتی طبقہ کے نوجوانوں کو 10 لاکھ روپئے گرانٹ کی فراہمی کا فیصلہ کیا ہے ۔ اسکیم سے استفادہ کرنے والوں کی حد عمر 30 سال رکھی گئی تھی جسے متعدد نمائندگیوں کے بعد 35 سال کردیا گیا ہے تاکہ زیادہ سے زیادہ طلبہ مستفید ہوسکیں ۔ گزشتہ مئی کے دوران جاری کردہ سرکاری احکامات میں ترمیم کے فیصلے کے بعد اب مزید نوجوان جن کی عمریں 30 سال سے متجاوز کرچکی ہیں اور اندرون 35 سال ہیں وہ درخواست داخل کرنے کے اہل قرار دیئے گئے ہیں ۔ احکامات کے مطابق یکم / جولائی تک درخواست گزار کی عمر 35 برس سے تجاوز نہیں کرنی چاہئیے ۔ درخواست گزار آن لائن درخواستوں کے ادخال کیلئے ہیلپ لائین سے رجوع ہوسکتے ہیں یا www.telanganaepass.cgg.gov.in پر درخواستیں داخل کرسکتے ہیں ۔ درخواستوں کے ادخال کی آخری تاریخ یکم / اگست مقرر کی گئی ہے ۔ منتخبہ امیدواروں کو ریاستی حکومت ایک رخی فضائی سفر اسپانسر کریگی ۔ اسکیم سے استفادہ کیلئے موصول ہونے والی درخواست کا جائزہ لینے کیلئے انتخابی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جس میں وائس چانسلر جے این ٹی یو ، اسپیشل سکریٹری محکمہ اقلیتی بہبود ، کمشنر فنی تعلیم کے علاوہ دیگر موجود ہوں گے ۔ درخواستوں کے ادخال کی تاریخ میں کسی قسم کی توسیع کا امکان نہیں ہے کیونکہ /4 اگست کو محکمہ نے قطعی میرٹ لسٹ جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ درخواست گزار کی خاندانی آمدنی سالانہ 2 لاکھ روپئے سے زائد نہ ہو۔ ریاستی حکومت کی جانب سے معلنہ اسکیم کے مطابق حکومت 500 اقلیتی نوجوانوں کو فی کس 10 لاکھ روپئے بطور تعلیمی گرانٹ جاری کرے گی جو کہ دو قسطوں میں ادا کی جائے گی ۔ اس اسکیم میں طالبات کیلئے 35 فیصد تحفظات فراہم کئے گئے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT