Tuesday , September 26 2017
Home / ہندوستان / سیاہ ہرن شکار کیس کا نیا موڑ

سیاہ ہرن شکار کیس کا نیا موڑ

فلمی اداکار سلمان خان اپنے بیان سے منحرف
جودھپور۔/10مارچ، ( سیاست ڈاٹ کام) فلمی اداکار سلمان خان نے اپنے آپ کو بے قصور ظاہر کرتے ہوئے آرمس ایکٹ کیس میں آج یہاں ایک عدالت میں اپنا بیان ریکارڈ کرواتے ہوئے یہ الزام عائد کیا کہ فاریسٹ عہدیداروں نے انہیں پھنسایا ہے جبکہ انہیں اکٹوبر 1998 میں راجستھان کے موضع کنکنی میں نایاب جانور سیاہ ہرنوں کے غیر قانونی شکار کے الزامات کا سامنا ہے۔ سلمان خان نے چیف جوڈیشیل مجسٹریٹ کے روبرو یہ بیان دیا کہ وہ بے قصور ہیں اور محکمہ جنگلات کے عہدیداروں نے انہیں کیس میں پھانسا ہے۔ انہوں نے قبل ازیں دیئے گئے ایک اقبالیہ بیان کا بھی حوالہ دیا جس میں ایک گواہ اودئے راگھوان نے بتایا تھا کہ فلمی اداکار کی ہدایت پر انہوں نے ممبئی سے ہتھیار لائے تھے لیکن آج سلمان خان نے اپنے موقف سے انحراف کرتے ہوئے یہ ادعا کیا کہ فاریسٹ عہدیداروں کے دباؤ میں آکر اس بیان پر دستخط کئے تھے۔ انہوں نے بیان کے استبدار میں عدالت سے کہا کہ میں ہندوستانی ہوں اور یہی میری ذات ہے۔ عدالت نے آئندہ سماعت کی تاریخ  4اپریل مقرر کی ہے ۔ ایڈیشنل پبلک پراسیکوٹر دنیش تیواری نے بتایا کہ عدالت نے سلمان خان کو یہ موقع دیا ہے کہ اپنے دفاع میں کوئی ثبوت یا گواہ پیش کریں، اگر وہ ایسا کرسکتے ہیں تو عدالت میں غور وخوض کیا جائیگا بصورت دیگر قطعی مباحث کیلئے کیس کو فہرست میں شامل کرلیا جائیگا۔

TOPPOPULARRECENT