Thursday , August 24 2017
Home / شہر کی خبریں / سیول سرویس کوچنگ کے لیے 27 دسمبر کو نتائج

سیول سرویس کوچنگ کے لیے 27 دسمبر کو نتائج

کوچنگ کے لیے تین نامور اداروں کا انتخاب ، محکمہ اقلیتی بہبود
حیدرآباد۔/22ڈسمبر، ( سیاست نیوز) محکمہ اقلیتی بہبود نے جاریہ سال 3 نامور سیول سرویس کوچنگ سنٹرس میں اقلیتی طلباء کو داخلہ فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اقلیتی طلباء کیلئے سیول سرویس کوچنگ فراہمی اسکیم کے تحت جاریہ سال دو بیاچس میں 100 طلباء کو 3 خانگی کوچنگ سنٹرس میں داخلہ دیا جائے گا۔ ان اداروں کے ناموں کو محکمہ اقلیتی بہبود نے آج منظوری دے دی ہے۔ سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل اور ڈائرکٹر سی ای ڈی ایم پروفیسر ایس اے شکور نے 3 خانگی نامور کوچنگ سنٹرس آر سی ریڈی، حیدرآباد اسٹڈی سرکل اور برین ٹری میں اقلیتی طلباء کو کوچنگ فراہم کرنے کو منظوری دی ہے۔ 4 اداروں کی جانب سے فیس اسٹرکچر داخل کیا گیا تھا جس میں سب سے زیادہ لاء ایکسلینس نے ایک لاکھ 65 ہزار فیس مقرر کی جبکہ آر سی ریڈی نے ایک لاکھ 21 ہزار، برین ٹری نے ایک لاکھ 25 ہزار اور حیدرآباد اسٹڈی سرکل نے 93 ہزار فیس کی تجویز پیش کی۔ کافی غور و خوض اور ان اداروں سے مشاورت کے بعد لاء ایکسلینس کی تجویز کو قبول نہیں کیا گیا اور باقی تین اداروں میں اقلیتی طلباء کو کوچنگ فراہم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اس کوچنگ پر محکمہ اقلیتی بہبود کو دیڑھ کروڑ روپئے کا خرچ آئے گا۔ غیر مقامی طلباء کو ماہانہ 5 ہزار روپئے اور مقامی طلباء کو 2 ہزار روپئے اسٹائیفنڈ دیا جائے گا۔ پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ پہلے مرحلہ میں منتخب 42 طلباء کو اندرون ایک ہفتہ مذکورہ تینوں اداروں میں داخلہ دیا جائے گا۔ ان اداروں سے یادداشت مفاہمت پر دستخط کا کام باقی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پہلے بیاچ کے تحت 42 طلباء کی کوچنگ شروع ہوگی جبکہ دوسرے بیاچ میں 58 طلباء کو داخلہ دلایا جائے گا۔ دوسرے بیاچ کے طلباء کے انتخاب کیلئے اسکریننگ ٹسٹ رکھا گیا تھا جس کے نتیجہ کا اعلان 27 ڈسمبر کو کیا جائے گا۔ انہوں نے بتایا کہ ایک سہ رکنی کمیٹی نے ان اداروں کا انتخاب کیا ہے اور یہ پہلا موقع ہے جب اقلیتی طلباء کو ان کی پسند کے کوچنگ سنٹرس میں داخلہ دیا جائے گا اور تمام اخراجات حکومت برداشت کرے گی۔ خانگی اداروں میں حکومت کی جانب سے اپنے مکمل خرچ پر کوچنگ فراہم کرنے کا مقصد سیول سرویسیس میں مسلمانوں کی نمائندگی میں اضافہ کرنا ہے۔ واضح رہے کہ گزشتہ سال اقلیتی طلباء کو سیول سرویسیس کی کوچنگ فراہم نہیں کی جاسکی کیونکہ خانگی اداروں کے انتخاب میں محکمہ اقلیتی بہبود کے عہدیداروں نے تساہل کا مظاہرہ کیا تھا۔ گزشتہ سال اسکریننگ ٹسٹ میں منتخب 43 طلباء جاریہ سال کوچنگ حاصل کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT