Wednesday , August 23 2017
Home / جرائم و حادثات / سیکس ریاکٹ بے نقاب، 44 افراد گرفتار

سیکس ریاکٹ بے نقاب، 44 افراد گرفتار

مہاراشٹرا میں تلنگانہ پولیس کی کارروائی ، اڈیشنل ڈی جی پی ، سی آئی ڈی کی پریس کانفرنس
حیدرآباد /24 جولائی ( سیاست نیوز ) تلنگانہ سی آئی ڈی نے سیکس ریاکٹ کیلئے لڑکیوں کی اسمگلنگ میں ملوث 44 افراد کو گرفتار کرلیا گیا ۔ ایڈیشنل ڈائرکٹر جنرل آف پولیس سی آئی ڈی مسٹر ستیہ نارائن نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ سی آئی ڈی کو یہ اطلاعات موصول ہوئی تھی کہ مہاراشٹرا چندرا پور میں ریاست سے تعلق رکھنے والے کئی لڑکیوں کو جسم فروشی کیلئے غیر قانونی طور پر قحبہ گری اڈہ پر محروس رکھا گیا تھا ۔ اس اطلاع پر فوری کارروائی کرتے ہوئے انسداد انسانی اسمگلنگ ٹیم فوری حرکت میں آتے ہوئے مہاراشٹرا کے گوتم نگر اور چندرا پور علاقوں میں مہاراشٹرا پولیس کی مدد سے 39 لڑکیوں اور 8 کم عمر لڑکیوں کو اسمگلرس کے چنگل سے رہا کرالیا ۔ 31 متاثرہ لڑکیوں میں  18 کا تعلق تلنگانہ سے ہے ایک کا آندھراپردیش ، ایک کرناٹک اور 11 کا تعلق مہاراشٹرا سے ہے ۔ 8 کم عمر متاثرہ لڑکیوں میں 6 کا تعلق ریاست تلنگانہ اور 2 کا تعلق مہاراشٹرا سے ہے ۔ سی آئی ڈی نے انسانی اسمگلنگ میں ملوث 44 افراد کو گرفتار کرلیا اور انہیں چندرا پور کی مقامی عدالت میں پیش کرنے کے بعد حیدرآباد منتقل کرتے ہوئے نامپلی کریمنل کورٹ میں پیش کیا گیا ۔ مسٹر ستیہ نارائن نے بتایا کہ گرفتار اسمگلرس کو 15 دن کیلئے عدالتی تحویل میں دے دیا گیا ہے ۔ انہوں نے مزید بتایا کہ قحبہ گری کے اڈوں پر دلالوں کو مدد کرنے والے 7 کم عمر لڑکوں کو بھی حراست میں لیتے ہوئے مہاراشٹرا پولیس کے حوالے کردیا گیا ۔ انہوں نے بتایا کہ جاریہ سال انسداد انسانی اسمگلنگ ٹیم نے 422 مقدمات درج کئے ہیں اور اس ٹیم نے 607 متاثرہ لڑکیوں کو اسمگلرس کے چنگل سے رہا کروانے میں کامیابی حاصل کی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT