Wednesday , August 23 2017
Home / Top Stories / سی آر پی ایف ٹیم پر نکسلائٹ حملہ، 25 جوان ہلاک

سی آر پی ایف ٹیم پر نکسلائٹ حملہ، 25 جوان ہلاک

چھتیس گڑھ کے ضلع سکما میں تباہ کن کارروائی، مہلوکین کے اسلحہ اور آلات کیساتھ 300 مائونواز فرار، صدر ، وزیراعظم و دیگر کا اظہار مذمت
نئی دہلی۔24 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) چھتیس گڑھ کے ضلع سکما میں نکسلائٹوں کی طرف سے گھات لگاکر کئے گئے ایک تباہ کن حملے میں سی آر پی ایف کے کم سے کم 25 جوان ہلاک اور دیگر سات شدید زخمی ہوگئے۔ اس ریاست میں ماؤنواز تشدد سے بدترین متاثرہ علاقہ جنوبی بستر کے بورکاپل۔ چنتہ گفا کے درمیان دوپہر تقریباً 12:25 بجے یہ ہلاکت خیز حملہ کیا گیا جس میں شدید زخمی سی آر پی ایف کے 7 جوانوں کو بحفاظت منتقل کرنے کی مساعی کی گئی۔ سنٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے 74 ویں بٹالین سے تعلق رکھنے والے جوانوں کو ماؤنوازوں کے خلاف مہم کے لیے اس علاقہ میں تعینات کیا گیا تھا۔ سکما پولیس کے ایڈیشنل سپرنٹنڈنٹ جتیندر شکلا نے کہا کہ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب سی آر پی ایف کی 74 ویں بٹالین کی ٹیم بورکاپل۔چنتہ گفا کے درمیان گشت میں مصروف تھی، ان جوانوں کو ایک زیر تعمیر سڑک کی سکیوریٹی کے لیے متعین کیا گیا تھا۔ مائونوازوں نے سی آر پی ایف اہلکاروں پر گھات لگاکر حملہ کردیا اور بلا اشتعال فائرنگ بھی کی۔ اطلاعلات کے مطابق سی آر پی ایف کے 90 جوان اس سڑک کی افتتاحی تقریب میں شرکت کررہے تھے کہ ماؤنوازوں نے اُنھیں حملے کا نشانہ بنایا۔ سی آر پی ایف کے ایک کانسٹیبل شیر محمد نے جو اس حملے میں زخمی ہوئے ہیں کہا کہ ’’نکسلائٹوں نے ہمارے مقام کا پتہ چلانے کے لیے دیہاتیوں کو یہاں روانہ کیا تھا۔ بعدازاں تقریباً 300 نکسلائٹوں نے ہم پر حملہ کیا۔ ہم نے بھی فائرنگ کی اور کئی نکسلائٹوں کو ہلاک کیا۔ میں نے تین یا چار نکسلائٹس کے سینے میں گولی اتاردی۔‘‘ شکلا نے کہا کہ واقعے کے فوری بعد قریبی سی آر پی ایف کیمپ سے کمک روانہ کی گئی اور زخمیوں کو ذریعہ ہیلی کاپٹر رائے پور ہاسپٹل منتقل کیا گیا۔ انہوں نے کہاکہ سی آر پی ایف کے تمام 25 مہلوک جوانوں کے اسلحہ، وائرلیس سیٹس، گولہ بارود اور دیگر ساز و سامان کو ماؤنوازوں نے لوٹ لیا۔ اس حملے کے بعد چھتیس گڑھ کے چیف منسٹر رمن سنگھ دہلی میں اپنی مصروفیات منسوخ کرتے ہوئے رائے پور واپس ہوگئے اور ہنگامی اجلاس منعقد کیا۔
l  صدرجمہوریہ پرنب مکرجی، وزیراعظم نریندر مودی و دیگر قائدین نے آج سی آر پی ایف ٹیم پر نکسلائٹس کے حملے کی پرزور مذمت کی۔ صدرجمہوریہ نے ٹوئٹر پر کہاکہ مہلوکین کے خاندانوں سے تعزیت کا اظہار کرتا ہوں،زخمیوں کی صحت یابی کیلئے دعا گو ہوں۔ وزیراعظم نریندر مودی نے اس حملے کو بزدلانہ اور افسوسناک قرار دیا۔صدر کانگریس سونیا گاندھی ، راہول گاندھی نے بھی واقعہ کی مذمت کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT