Thursday , August 24 2017
Home / Top Stories / سی بی آئی کو اُس فائیل کی تلاش تھی جس میں جیٹلی کا ذکر ہے

سی بی آئی کو اُس فائیل کی تلاش تھی جس میں جیٹلی کا ذکر ہے

وزیر فینانس پھنس سکتے ہیں،کجریوال کا دعویٰ

نئی دہلی 15 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال جو دہلی سکریٹریٹ پر سی بی آئی کے دھاوے پر شدید برہم ہیں، آج الزام عائد کیاکہ دن بھر طویل کارروائی جو سی بی آئی کی جانب سے کی گئی تھی، درحقیقت اُس فائیل کی تلاش میں کی گئی تھی جس میں ایک تحقیقاتی کمیٹی کی رپورٹ شامل ہے جو ضلع دہلی کرکٹ اسوسی ایشن کے بارے میں ہے اور جس کے نتیجہ میں مرکزی وزیر فینانس ارون جیٹلی ’’پھندے میں پھنس سکتے‘‘ ہیں۔ انھوں نے کہاکہ یہ انکشاف کرنا ضروری ہوگیا ہے کہ سی بی آئی نے اُن کے دفتر پر آج دھاوا کیوں کیا تھا۔ اُنھیں کسی فائیل کی تلاش تھی یہ ڈی ڈی سی اے کی فائیل ہے جس میں شامل رپورٹ کی وجہ سے ارون جیٹلی کے پھنس جانے کا اندیشہ ہے۔ کجریوال نے کہاکہ اُن کی حکومت نے ایک تحقیقاتی کمیٹی قائم کی تھی تاکہ ڈی ڈی سی اے میں مبینہ بے قاعدگیوں کی تحقیقات کی جاسکیں۔ کمیٹی نے اپنی رپورٹ پیش کردی ہے۔ انھوں نے کہاکہ جیٹلی کئی سال تک ڈی ڈی سی اے کے صدر رہ چکے ہیں اور اُنھوں نے کرپشن کے تمام معاملات کی تحقیقات کے لئے ایک کمیٹی قائم کی تھی جو ان کی میعاد کے دوران پیش آئے تھے۔ کمیٹی نے اپنی رپورٹ پیش کردی ہے اور ایک تحقیقاتی کمیشن قائم کیا گیا تھا جو اس کا جائزہ لے سکے۔

یہ فائیل اُن کے دفتر میں تھی۔ سی بی آئی نے واضح نہیں کیاکہ وہ کیا تلاش کررہی ہے۔ کجریوال کے دفتر کے پرنسپال سکریٹری راجندر کمار جو دہلی سکریٹریٹ میں برسرکار ہیں اور چیف منسٹر سے اُن کا کوئی تعلق نہیں ہے۔ اگر یہ کارروائی اُن کے خلاف الزامات کے بارے میں تھی تو چیف منسٹر کے دفتر کی کیوں تلاشی لی گئی۔ کجریوال نے کہاکہ اِس کا واحد مقصد مجھے نشانہ بنانا تھا۔ اُنھوں نے وزیراعظم نریندر مودی سے مطالبہ کیاکہ وہ قوم سے اپنے اس ’’کالے کارنامے‘‘ پر معذرت خواہی کریں۔ اُنھوں نے تیقن دیا کہ وہ مودی کی معذرت خواہی کے بعد اُن کو ’’بزدل اور نفسیاتی مریض‘‘ قرار دینے پر معذرت خواہی کرلیں گے۔ اپنی کابینہ کے ایک اجلاس کے بعد جس میں پارٹی کے سینئر قائدین نے کجریوال کی بھرپور تائید کی تھی، چیف منسٹر نے کہاکہ مرکز اُنھیں خوف زدہ نہیں کرسکتا اور وہ اپنی آخری سانس تک جدوجہد کرتے رہیں گے۔ اُنھوں نے کہاکہ مرکز کو کنٹراکٹس سے کوئی دلچسپی نہیں ہے جو راجندر کمار نے کئے تھے۔ اگر انھوں نے 2007 ء میں کنٹراکٹ دیئے تھے تو 2015 ء تک آپ کیا کررہے تھے مودی جی؟ یہ آپ کی حکومت کے لئے کافی طویل مدت ہے کیوں کہ مودی حکومت کو برسر اقتدار آکر 18 ماہ گزر چکے ہیں۔ اِس لئے کہ وہ مودی جی سے کہہ دینا چاہتے ہیں کہ وہ سی بی آئی کے ذریعہ ممکن ہے کہ دوسروں کو خوفزدہ کرسکتے ہوں گے لیکن کجریوال خوفزدہ نہیں ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT