Saturday , June 24 2017
Home / شہر کی خبریں / شادیوں میں فضول خرچی اور اسراف کو ختم کرنا ضروری

شادیوں میں فضول خرچی اور اسراف کو ختم کرنا ضروری

مسلمانوں کو پاکیزہ زندگی گذارنے کی تلقین ، پہاڑی شریف میں دعوت اسلامی کا سہ روزہ اجتماع
حیدرآباد ۔ 11 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : دعوت اسلامی کے سنتوں بھرا اجتماع کا آغاز 10 مارچ نماز جمعہ کی ادائیگی کے ساتھ ہی ہوا ۔ نماز جمعہ مولانا مفتی عبدالحلیم ناگپوری نے پڑھائی جس میں ملک بھر اور ریاست تلنگانہ کے مسلمانوں کی بڑی تعداد شریک ہے ۔ نماز جمعہ کے فوری بعد حافظ و قاری محمد رئیس عطاری کی تلاوت قرآن مجید اور نعت شریف سے اجتماع کا آغاز ہوا ۔ حاجی مقصود عطاری نگران جلسہ نے شرکاء کا خیر مقدم کیا اور کہا کہ اس سہ روزہ اجتماع میں جید علماء کرام کے بیانات ہوں گے اس لیے جو مندوبین ملک اور دیگر ممالک سے آئے ہیں انہیں چاہئے کہ صبر کے دامن کو ہاتھ سے جانے نہ دیں ۔ حاجی شبیر میمن نے ان دنوں سماج و معاشرہ میں پائے جانے والے خرافات ، فضول خرچی کو کیسے روکا جائے تفصیل سے بیان کیا اور کہا کہ قرآن نے کہا کہ فضول خرچ لوگ شیطان کے بھائی ہوتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ شادی بیاہ اور دیگر رسومات میں ان دنوں فضول خرچی بڑی تیزی کے ساتھ بڑھتی جارہی ہے ۔ اس لیے ضروری ہے کہ مسلمان اسلامی تعلیمات کے عین مطابق اپنی زندگی گذاریں تاکہ جو کمائی ہوئی دولت ہے اسے اللہ کی راہ میں خرچ کیا جاسکے ۔ مولانا مفتی عبدالحلیم ناگپور نے حسن اخلاق کی برکتوں کے موضوع پر اظہار خیال کیا اور کہا کہ اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید کے بیشتر آیات حسن اخلاق سے رہنے کی تلقین اور کہا کہ جس نے بھی پاکیزہ زندگی بسر کی اور مومنانہ صفات کو اپنے میں شامل کیا اسے دنیا اور آخرت میں اجر عظیم سے فراز کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ کسی سے مسکرا کر بھی بات کرنا عبادت ہے ۔ آقائے دو جہاں کی حیات طبیہ اور احادیث کی روشنی میں انہوں نے معاشرہ کی اصلاح کے لیے ہر ایک کو آگے آنے کی ضرورت پر زور دیا ۔ حاجی شبیر میمن نے والدین کی ذمہ داری اور اولاد کی تربیت کے موضوع پر سیر حاصل تقریر کی ۔ ان کی تقریر پر نعرہ تکبیر کی صدائیں سنائی دے رہی تھی اور کہا کہ والدین اس دنیا میں اللہ کا ایک عظیم تحفہ ہیں ان کی قدر کرنا اور انہیں عزت و توقیر سے رکھنا اور ان کے سامنے کوئی بڑی بات نہیں کہنا اور اپنی نظروں کو نیچی رکھنا یہ تمام کی تمام نیکیاں ہیں جو اولاد کو دی جائیں گی ۔ والدین کی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنی اولاد کی تربیت و تعلیم کے لیے منصوبہ بندی کریں اور انہیں ایسے ماحول میں رکھیں جہاں اسلامی تعلیمات سے واقفیت ہوتی ہو اس لیے کہ ٹی وی اور دوسرے امور بچوں کے ذہنوں کو خراب کرنے میں اہم کردار ادا کررہے ہیں ۔ مولانا سید عارف علی عطاری نے والدین کے مرتبہ اور آداب پر تفصیلی روشنی ڈالی ۔ نماز عشاء 10 بجے شب ادا کی گئی ۔ دوسرے روز دعوت اسلامی کے اجتماع کا آغاز نماز فجر کی ادائیگی کے ساتھ ہوا ۔ قرات کلام پاک کے بعد جناب جمیل عطاری احمد آبادی نے نعت شریف کا نذرانہ پیش کیا ۔ حاجی غلام یسین نوری ( ناگپور ) نے قرآن پاک کی تلاوت کی فضیلت پر روشنی ڈالی اور کہا کہ قرآن کے ایک حرف کا پڑھنا اور یاد کرنا عبادت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج ضرورت اس بات کی ہے کہ نوجوان نسل کو قرآن کے آیات معنی و مفہوم سے واقف کروایا جائے ۔ حاجی شبیر عطاری نے تربیت اولاد کے موضوع پر اظہار خیال کیا جب کہ مولانا مقصود احمد نے اسراف و بے جا رسومات کے موضوع پر مخاطب کیا ۔ مولانا عبدالحکیم نے علم کی روشنی پر کہا کہ آج ضرورت اس بات کی ہے کہ ایک ایک گھر میں حافظ قرآن اور عالم دین کو تیار کرنے کی فکر کی جائے ۔ تاکہ گھر سے گھر اسلامی علوم کا چراغ جلتا رہا ۔ دعوت اسلامی کے اس عظیم الشان اجتماع میں ملک بھر میں دعوت اسلامی کے مدارس دینیہ میں وہاں سے فارغ ہونے والے طلباء کی اس اجتماع میں دستار بندی کی گئی ۔ بابا شرف الدین پہاڑی شریف روڈ میں منعقد ہونے والے اجتماع میں شرکت کے لیے ملک اور بیرون ملک اور آندھرا اور تلنگانہ کی ریاستوں سے مسلمان شریک ہیں جن کے لیے علحدہ علحدہ قیام گاہیں بنائی گئی ہیں ۔ اور اس سہ روزہ اجتماع میں کھانے اور نمازوں کی ادائیگی اور علماء کرام کے خطابات کو سننے کے لیے انتظامیہ نے طاقتور لاوڈ اسپیکر کا نظم کیا ۔ دعوت اسلامی کے والینٹرس کی بڑی تعداد اجتماع گاہ پہنچنے والوں کی رہبری و رہنمائی کررہی ہے ۔ پروگرام کے مطابق اتوار 12 مارچ کو صبح 9-30 بجے اجتماع کا آغاز ہوگا اور نماز ظہر تک خصوصی بیانات ، ذکر تصور مدینہ اور دعا ہوگی ۔۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT