Tuesday , September 26 2017
Home / دنیا / شامی تنظیم النصرہ فرنٹ کے حملے ‘ 11 افراد ہلاک

شامی تنظیم النصرہ فرنٹ کے حملے ‘ 11 افراد ہلاک

امریکی حمایت والی باغی تنظیم ڈویژن 30 کا ہیڈ کوارٹر نشانہ ۔ مسلسل دوسرے دن کارروائی

بیروت 31 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) القاعدہ سے الحاق رکھنے والی شامی تنظیم النصرہ فرنٹ نے آج ملک کے شمال میں امریکہ کے قائم کردہ ایک گروپ کے ہیڈ کوارٹرس کو حملہ کا نشانہ بنایا جس کے نتیجہ میں کم از کم 11 افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔ ایک نگران کار گروپ نے یہ اطلاع دی ۔ یہ حملہ آج کیا گیا جبکہ کل ہی النصرہ فرنٹ نے ڈویژن 30 سے کم از کم آٹھ باغیوں کا اغوا کرلیا تھا ۔ ان باغیوں کو امریکہ نے تربیت دیتے ہوئے ہتھیار فراہم کئے تھے ۔ حقوق انسانی کی نگرانی کرنے والے گروپ کی شامی یونٹ نے یہ بات بتائی ۔ برطانیہ سے کام کرنے والے ادارہ نے بتایا کہ النصرہ فرنٹ نے ڈویژن 30 کے ہیڈ کوارٹرس پر شمالی صوبہ حلب کے شہر اعزاز کے قریب یہ کارروائی کی ہے ۔ گروپ کے ڈائرکٹر رامی عبدالرحمن نے بتایا کہ ایک حملہ کے بعد جھڑپیں بھی شروع ہوگئی تھیں جن میں النصرہ فرنٹ کے پانچ جنگجو ہلاک ہوگئے تھے ۔ اس کے علاوہ چھ باغی بھی اس کارروائی میں ہلاک ہوگئے ہیں جو ڈویژن 30 کی حفاظت کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ النصرہ فرنٹ نے باغیوں کو واشنگٹن کی جانب سے فراہم کردہ ہتھیار حاصل کرنے کیلئے یہ حملہ کیا تھا تاہم اس گروپ کو باغیوں کے ہیڈکوارٹرس میں داخلہ کا موع نہیں مل سکا کیونکہ دن بھر جھڑپیں چلتی رہیں۔ ڈویژن 30 نے اپنے فیس بک پیج پر جاری کردہ ایک بیان میں النصرہ فرنٹ پر زور دیا ہے کہ وہ مسلمانوں کا خون بہانا بند کرے ۔ اس ڈویژن کے کم از کم 54 ارکان وسط جولائی میں شام میں داخل ہوئے تھے اور انہیں امریکہ کی تیار کردہ پہاڑی علاقوں میں کارکرد سمجھی جانے والی 30 گاڑیاں فراہم کی گئی تھیں ۔ انہیں ہتھیار اور اسلحہ بھی دیا گیا ہے ۔ ان کے منجملہ آٹھ کو کل یرغمال بنالیا گیا تھا جن میں ایک کمانڈر بھی شامل تھا ۔ یہ کارروائی بھی حلف صوبہ کے ایک گاؤوں میں کی گئی تھی ۔ ڈویژن 30 نے کرنل ندیم حسن کو یرغمال بنائے جانے کی مذمت کی تھی اور مطالبہ کیا تھا کہ النصرہ فرنٹ کے بھائیوں کو چاہئے کہ وہ کرنل ندیم حسن کو فوری رہا کردیں۔

TOPPOPULARRECENT