Thursday , August 17 2017
Home / دنیا / شام کی جنگ کے زخمیوںکا علاج ‘ اسرائیل پابند

شام کی جنگ کے زخمیوںکا علاج ‘ اسرائیل پابند

یروشلم۔9اپریل ( سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم بنجامن نتن یاہو نے آج کہاکہ اسرائیل شام کی جنگ میںزخمی ہوجانے والوں کے علاج کا پابند ہے اور دوبارہ توثیق کی کہ گذشتہ ہفتہ امریکی فضائی حملوں سے پڑوسی ملک میں جو افراد زخمی ہوئے ہیں اسرائیل ان کے علاج کا بھی پابند ہے ۔ ان کے تبصرے کابینی اجلاس کے آغاز کے وقت سامنے آئے ۔ نتن یاہو نے اس بات کی وضاحت نہیں کی کہ گذشتہ ہفتہ شام میں مشتبہ کیمیائی حملہ کے دوران زخمی ہوجانے والے افراد کا بھی اسرائیل علاج کرے گا ۔ اسرائیل کے ذرائع ابلاغ نے کہا کہ ایسا کرنے کی ایک تجویز پیش کی گئی ہے ‘ جس پر بعض سرکاری اور صیانتی عہدیداروں نے اعتراض کیا ہے اور اس کی وجہ دفاعی مشکلات ہیں ۔ حملہ کا مقام اسرائیل کی سرزمین سے کافی فاصلہ پر واقع ہے ۔ اسرائیل نے تین ہزار سے زیادہ جنگ کے دوران زخمی ہونے والوں کا انسانی خیرسگالی کے طور پر علاج کیا ہے ۔ اسرائیل نے کہا کہ جو بھی دونوں ممالک کے درمیان سرحد پار کر کے ہمارے ملک میں داخل ہوتا ہے ‘ چاہے صدر شام بشارالاسد کی نظر میں وہ اسرائیل کی تائید کرنے کی وجہ سے دہشت گرد قرار دیئے جائیں ہم ان کا علاج کرتے ہیں ۔ یہ ایک انسانی خیرسگالی ہے ۔ کئی تجزیہ نگاروں کا کہنا ہے کہ اس پالیسی کا ایک دفاعی مقصد بھی ہے ۔ اسرائیل اپنے آپ کو مثبت نقطہ نظر سے پیش کرنا چاہتا ہے ۔ زخمی شامیوں کا علاج انسانی بنیادوں پر کیا جارہا ہے ۔ وزیراعظم اسرائیل نتن یاہو نے دوبارہ اس کا ادعا کرتے ہوئے کہا کہ ہم ایسا کرنا جاری رکھیں گے ۔امریکہ نے بشارالاسد کی حکومت کے خلاف پہلی بار راست فوجی کارروائی کی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT