Friday , August 18 2017
Home / شہر کی خبریں / شب برات کے موقع پر قبرستانوں میں صاف صفائی اور روشنی کے انتظامات

شب برات کے موقع پر قبرستانوں میں صاف صفائی اور روشنی کے انتظامات

مساجد اور قبرستانوں کی کمیٹیوں کو صدر نشین وقف بورڈ محمد سلیم کی ہدایات
حیدرآباد ۔ 9۔ مئی (سیاست نیوز) صدرنشین وقف بورڈ محمد سلیم نے شب برأت کے موقع پر مساجد اور قبرستانوں میں موثر انتظامات کے سلسلہ میں مساجد اور قبرستان کمیٹیوں کو ہدایات جاری ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کمیٹیوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ مصلیوں اور قبرستان فاتحہ خوانی کیلئے جانے والے افراد کو تمام تر سہولتیں فراہم کریں۔ قبرستانوں میں جھاڑیوں کی صفائی کا کام انجام دیا جائے اور روشنی کا بھی مناسب انتظام رہے۔ انہوں نے کہا کہ مساجد اور قبرستان کمیٹیوں کی جانب سے انتظامات میں کسی قسم کی کوتاہی پر کارروائی کی جاسکتی ہے ۔ محمد سلیم نے کہا کہ مساجد کے اطراف صحت و صفائی کے انتظامات اور مناسب روشنی کے سلسلہ میں گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن اور محکمہ برقی کے عہدیداروں سے نمائندگی کی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس مقدس رات کو مجلس بلدیہ کی جانب سے کچرے کے نکاسی پر خصوصی توجہ دی جانی چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ مساجد کے اطراف ٹریفک کی بآسانی بحالی کو یقینی بنانے کیلئے ٹریفک پولیس متحرک رہے گی ۔ انہوں نے کہا کہ امن و امان کی برقراری حکومت کی اولین ترجیح ہے ، لہذا عوام کو بھی پولیس کے ساتھ مکمل تعاون کرنا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ مساجد میں وضو اور پینے کیلئے پانی کا معقول انتظام کیا جانا چاہئے ۔ شہر اور اضلاع میں شب برات کے موقع پر بلا وقفہ برقی کی سربراہی اور پانی کی خصوصی سربراہی کے سلسلہ میں نمائندگی کی گئی ہے ۔ اسی دوران صدرنشین وقف بورڈ نے عہدیداروں کا اجلاس طلبہ کرتے ہوئے چیف اگزیکیٹیو آفیسر کی جانب سے طلب کی گئی تفصیلات پیش کرنے میں تساہل پر برہمی کا اظہار کیا ۔ انہوں نے کہا کہ وقف بورڈ میں حقیقی اور باصلاحیت ملازمین کا پتہ چلانے کیلئے تعلیمی قابلیت اور تقرر سے متعلق تفصیلات طلب کی گئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر مقررہ مدت کے دوران یہ تفصیلات داخل نہیں کی گئیں تو ملازمین کو معطلی کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ انہوں نے تمام سیکشنوں کے انچارجس کو ہدایت دی کہ اپنے ماتحت ملازمین کی تفصیلات چیف اگزیکیٹیو آفیسر کو پیش کرے۔ محمد سلیم نے اس سلسلہ میں عہدیداروں کے عدم تعاون کے رویے پر ناراضگی ظاہر کی۔ انہوں نے کہا کہ بڑے پیمانہ پر تبدیلیاں عمل میں لائی جائیں گی۔ شعبہ قضاۃ میں کارکردگی بہتر بنانے کیلئے زائد کمپیوٹرس نصب کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT