Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / شریعت محمدیؐ میں مداخلت ناقابل برداشت

شریعت محمدیؐ میں مداخلت ناقابل برداشت

سازشوں کو ناکام بنانے امت مسلمہ میں اتحاد وقت کا اہم تقاضہ
حیدرآباد ۔ 15 ۔ اکٹوبر : ( راست ) : حافظ محمد عبدالقیوم نعمانی امام جامع مسجد سدی عنبر بازار و صدر فلاح الحفاظ ٹرسٹ حیدرآباد ‘ تلنگانہ نے کہا کہ مسلمان اپنی جان و مال کو قربان کرسکتا ہے لیکن شریعت محمدیؐ میں مداخلت کو ہرگز برداشت نہیں کرسکتا۔صحافتی بیان میں مولانا نے کہا کہ مرکزی حکومت آج یکساں سیول کوڈ کی بات کررہی ہے جبکہ یکساں سیول کوڈ نہ صرف مسلمانوں بلکہ برادران وطن کیلئے بھی ہرگز قابل قبول نہیں ہے۔ہندوستان ایک متنوع سماج ہے جہاں پر مختلف مذاہب کے ماننے والے رہتے ہیں۔دستور کی رو سے تمام طبقات کو مذہبی آزادی دی گئی ہے۔شریعت میں مداخلت کی کوشش مسلمانوں کے دستوری حقوق کو سلب کرنے کی ایک منظم سازش ہے۔مسلمان‘ مسلم پرسنل لاء میں کسی بھی قسم کی تبدیلی یا دخل اندازی کو ہرگز برداشت نہیں کریں گے کیونکہ قانون شریعت خدا کا بنایا ہوا ہے اس میں کسی بھی قسم کی ترمیم یا تبدیلی کی گنجائش نہیں ہے۔طلاق ثلاثہ‘ تعددازدواج ‘ حلالہ اور تمام عائلی مسائل کا حل قرآن اور حدیث میں موجود ہے۔مسلمانوں کو مذکورہ مسائل کے حل کیلئے کہیں اور جانے کی قطعی ضرورت ہی نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت نے ایک منظم سازش کے تحت مسلمانوں کو نشانہ بنارہی ہے۔یکساں سیول کوڈ کے نام پر ایک ہوا کھڑا کیا جارہا ہے۔حافظ محمد عبدالقیوم نعمانی نے کہا کہ آج شریعت اور مسلمانوں کے خلاف سازشوں کو ناکام بنانے کیلئے امت مسلمہ میں اتحاد وقت کا اہم تقاضہ ہے۔

TOPPOPULARRECENT