Friday , March 24 2017
Home / Top Stories / ششی کلا جرم کی مرتکب، چار سال کی قید، سپریم کورٹ کا فیصلہ

ششی کلا جرم کی مرتکب، چار سال کی قید، سپریم کورٹ کا فیصلہ

پلانی سوامی انا ڈی ایم کے لیجسلیچر پارٹی کے نئے لیڈر منتخب، گورنر سے ملاقات، تشکیل حکومت کیلئے اکثریتی تائید کا ادعا

نئی دہلی ؍ چینائی ۔14 فروری (سیاست ڈاٹ کام) آل انڈیا انا ڈی ایم کے کی سربراہ وی کے ششی کلا کو آج زبردست دھکا لگا جب سپریم کورٹ نے رشوت کے ایک مقدمہ میں اُنھیں جرم کی مرتکب قرار دے دیا۔ اس فیصلہ کے بعد وہ 10 سال تک انتخابی مقابلہ نہیں کرسکیں گی۔ جس کے ساتھ ہی چیف منسٹر کے عہدہ پر فائز ہونے اُن کی ساری اُمیدوں پر پانی پھر گیا۔ سابق چیف منسٹر آنجہانی جیہ للیتا کی دیرینہ بااعتماد سہیلی 60 سالہ ششی کلا جو حکمراں انا ڈی ایم کے میں جاری اقتدار کی شدید رسہ کشی میں موجودہ کارگذار چیف منسٹر او پنیراسلوم سے سخت مقابلہ کا سامنا کررہی تھیں۔ سپریم کورٹ نے اُنھیں خود کو حکام کے حوالہ کرتے ہوئے اپنی چار سالہ سزائے قید کی باقی میعاد پوری کرنی کی ہدایت کی ہے۔ 570 صفحات پر مشتمل عدالتی فیصلہ کے اعلان کے بعد ہنوز یہ واضح نہیں ہوسکا ہے کہ ششی کلاء آیا کس وقت خود و حکام کے سپرد کریں گی۔ وہ پہلے ہی چھ ماہ بنگلور جیل میں گزار چکی ہیں۔

ششی کلاء کے وفادار 63 سالہ ایڈا پڈی کے پلانی سوامی کو ان کے بجائے انا ڈی ایم کے لیجسلیچر پارٹی کا قائد منتخب کرلیا گیا جنھوں نے آج گورنر سی ایچ ودیا ساگر راؤ سے ملاقات کرتے ہوئے تشکیل حکومت کے لئے اپنا دعویٰ پیش کیا۔ گورنر سے مختصر بات چیت کے دوران اپنے حامی ارکان اسمبلی کی فہرست پیش کی۔ اس موقع پر ان کے ساتھ چند وزراء اور متعدد ارکان اسمبلی بھی موجود تھے۔ تاہم ششی کلاء کی صدارت میں آج صبح منعقدہ لیجسلیچر پارٹی کے اجلاس میں شرکت کرنے والے ارکان اسمبلی کی تعداد واضح نہیں ہوسکی۔ مدراس ہائی کورٹ کو عوامی استغاثہ نے گزشتہ روز مطلع کیا تھا کہ ششی کلاء کے وفادار 119 ارکان اسمبلی اپنی مرضی سے ایک تفریح گاہ میں قیام پذیر ہیں۔ سپریم کورٹ نے بنگلور میں تحت کی عدالت کا مکمل فیصلہ بحال کرتے ہوئے نہ صرف ششی کلاء کو سزا دی بلکہ ان کے دو رشتہ داروں وی این سدھا کرن اور ایلاوا راسی کو بھی جیل بھیج دیا۔ سپریم کورٹ کی دو رکنی بنچ نے صرف آٹھ منٹ میں اپنا فیصلہ سنادیا اور اعلان کیاکہ کرناٹک ہائی کورٹ کے اس فیصلہ کو کالعدم کردیا گیا ہے جس میں جیہ للیتا، ششی کلا اور دیگر ملزمین کو بری کیا گیا تھا۔ سپریم کورٹ کے فیصلہ کے بعد چینائی میں جاری سیاسی سرگرمیوں میں زبردست اضافہ ہوگیا۔ پنیرا سیلوم نے بھی انا ڈی ایم کے کے ارکان سے ضمیر کی آواز پر اپنی تائید کی اپیل کی۔

جیل میں بھی مجھے پارٹی کی فکر ہوگی :ششی کلا
چینائی ۔ /14 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) اناڈی ایم کے کی جنرل سکریٹری وی کے ششی کلا جنہیں غیرمتناسب اثاثہ جات مقدمہ میں سپریم کورٹ کی جانب سے مجرم قرار دیا گیا ہے ۔ آج کہا کہ انہیں جیل میں رہنے کے بعد بھی پارٹی کی فکر لاحق رہے گی ۔ انہوں نے جذباتی تقریر کرتے ہوئے کہا کہ مجھے قید کیا جاسکتا ہے لیکن میری فکر اور خیالات پر کوئی پابندی نہیں لگائی جاسکتی ۔ جیل میں رہنے پر بھی مجھے پارٹی کی فکر لاحق رہے گی ۔ انہوں نے کہا کہ وہ 24 گھنٹے پارٹی کے بارے میں ہی سوچتی رہیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ مقدمہ بی ایم کے نے دائر کیا تھا اور پارٹی کے ارکان سے خواہش کی کہ وہ پوری طاقت سے اس کی مزاحمت کریں ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT