Saturday , August 19 2017
Home / Top Stories / ششی کلا کو انا ڈی ایم کے صدر بنائے جانے کا امکان

ششی کلا کو انا ڈی ایم کے صدر بنائے جانے کا امکان

چیف منسٹر پنیر سلیوم کا 2 گھنٹوں تک تبادلہ خیال
چینائی۔/8ڈسمبر، ( سیاست ڈاٹ کام ) چیف منسٹر تاملناڈو اوپینر سلیوم نے آج اپنی پیشر جیہ للیتا کی بااعتماد رفیق ششی کلا نٹراجن کے ساتھ تقریباً 2 گھنٹوں تک پائس گارڈن میں تبادلہ خیال کیا جوکہ آنجہانی انا ڈی ایم کے سربراہ کی قیامگاہ تھی۔ تاہم ملاقات کے بعد وہاں منتظر میڈیا کے نمائندوں سے چیف منسٹر نے کوئی بات چیت نہیں کی۔ ان کے ہمراہ سینئر وزراء بشمول سریواسن، ای کے پلانی سوامی اور پی تھنگا می بھی تھے۔ یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ 5ڈسمبر کو جیہ للیتا کی موت کے بعد پہلی مرتبہ دونوںکی ملاقات میں کئی موضوعات پر تبادلہ خیال کیا گیا جبکہ ششی کلا بھی پارٹی کی جنرل سکریٹری ہیں۔ باور کیا جاتا ہے کہ انا ڈی ایم کے کی قیادت کیلئے ایک نئے صدر کا تقرر ناگزیر ہوگیا ہے جبکہ جیہ للیتا کی موت کے بعد پنیر سلیوم نے سرکاری نظم و نسق پر کنٹرول سنبھال لیا ہے۔ سیاسی حلقوں میں یہ قیاس آرائیاں کی جارہی ہیں کہ ششی کلا کو پارٹی میں کلیدی رول تفویض کیا جاسکتا ہے۔ جیہ للیتا کی بااعتماد ساتھی ششی کلا کی اہمیت کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ سابق چیف منسٹر کی آخری رسومات انہوں نے انجام دیں جبکہ یہ مذہبی رسومات رشتہ دار ادا کرتے ہیں۔

کروناندھی ہاسپٹل سے ڈسچارج
چینائی۔/8ڈسمبر، ( سیاست ڈاٹ کام ) ڈی ایم کے سربراہ کروناندھی کو ڈاکٹروں نے مشورہ دیا کہ مکمل آرام کریں اور کسی بھی انفیکشن سے بچنے کیلئے لوگوں سے ملاقات نہ کریں جبکہ انہیں آج ایک خانگی ہاسپٹل سے ڈسچارج کردیا گیا۔ گذشتہ چند دنوں سے علاج کے بعد وہ آج کاویری ہاسپٹل سے مکان واپس ہوگئے۔ ڈاکٹروں نے انہیں مزید چند یوم مکمل آرام کرنے اور انفیکشن سے متاثر ہونے کے خلاف احتیاط برتنے کا مشورہ دیا ہے۔ پارٹی کے ایک صحافتی اعلامیہ میں یہ اطلاع دی جس میں ڈی ایم کے ورکرس اور کرناندھی کے دوست احباب سے کہا گیا ہے کہ وہ 97 سالہ لیڈر سے ملاقات کیلئے نہ آئیں۔ تاملناڈو کے سابق چیف منسٹر کو ڈرگ الرجی کی شکایت پر یکم ڈسمبر کو ہاسپٹل میں شریک کروایا گیا تھا اور کامیاب علاج کے بعد کاویری ہاسپٹل سے ڈسچارج کردیا گیا جبکہ اس مرض کی وجہ سے وہ گذشتہ ایک ماہ سے عوامی سرگرمیوں سے دور ہیں۔

TOPPOPULARRECENT