Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / شکر کی مصنوعی قلت اور قیمت میں اضافہ ناقابل برداشت

شکر کی مصنوعی قلت اور قیمت میں اضافہ ناقابل برداشت

ڈیلرس کے خلاف سخت کارروائی کا انتباہ ، سی وی آنند کمشنر سیول سپلائز
حیدرآباد ۔ 23 ۔ اگست : ( سیاست نیوز) : کمشنر محکمہ سیول سپلائز سی وی آنند نے مارکٹ میں شکر کی مصنوعی قلت پیدا کرتے ہوئے شکر کی قیمتوں میں اضافہ کرنے والے ڈیلرس اور بغیر لائسنس کے شکر فروخت کرنے والے تاجرین کے خلاف سخت کارروائی کرنے کا انتباہ دیا ۔ کمشنر سیول سپلائز سی وی آنند نے آج ہول سیل شکر فروخت کرنے والی تاجرین تنظیم کے نمائندوں کا ایک اجلاس طلب کرتے ہوئے انہیں بتایا کہ ریاست کے کئی مقامات سے انہیں شکایتیں وصول ہورہی ہیں ۔ ڈیلرس اور تاجرین گوداموں میں شکر پوشیدہ رکھتے ہوئے اس کی مارکٹ میں مصنوعی قلت پیدا کررہے ہیں اور شکر کی ڈیمانڈ میں اضافہ ہوجانے پر زیادہ قیمتوں پر شکر فروخت کررہے ہیں ۔ یہ کام زیادہ آمدنی کی لالچ میں دانستہ طور پر انجام دیا جارہا ہے ، جو غیر قانونی ہے ۔ محکمہ سیول سپلائز ایسے واقعات کے خلاف سخت کارروائی کرے گی ۔ سی وی آنند نے کہا کہ ڈیلرس اسی قیمت پر شکر فروخت کریں جس کا مرکزی و ریاستی حکومتوں نے تعین کیا ہے ۔ انہوں نے محکمہ سیول سپلائز کے عہدیداروں کو ہدایت دی ہے کہ وہ لائسنس کے بغیر شکر فروخت کرنے والے ڈیلرس اور تاجرین کے خلاف خصوصی مہم شروع کریں ۔ 5 کنٹل سے زیادہ شکر جمع رکھنے والے تاجر کو ڈیلر قرار دیں ۔ ایسے تاجرین متعلقہ اضلاع کے سیول سپلائز عہدیداروں تحصیلداروں سے ہول سیل رئیل لائسنس حاصل کریں ۔ بصورت دیگر ان کے خلاف اشیاء ضروریہ قانون کے تحت کارروائی کی جائے گی ۔ واضح رہے کہ مرکزی حکومت نے شکر کو جمع رکھنے اور لین دین کے لیے جو احکامات جاری کئے تھے اس پر 28 اکٹوبر 2017 تک جوں کا توں عمل آوری رہے گی ۔ ہول سیل کے لیے لائسنس کی قیمت 2 ہزار ریٹل کے لیے ایک ہزار دونوں ملا کر 3000 روپئے ہول سیل کے لیے سیکوریٹی ڈپازٹ 12000 ریٹل کے لیے 6000 دونوں ملا کر 18000 روپئے رہے گی ۔ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے حدود میں ہول سیلرس 2000 کنٹل ریٹلرس 50 کنٹل دوسرے مقامات پر ہول سیلرس 1000 کنٹل اور ریٹلرس 40 کنٹل شکر کا اسٹاک رکھ سکتے ہیں ۔ کمشنر سیول سپلائز سی وی آنند نے کہا کہ ان کے علم میں یہ بات آئی ہے کہ کئی تاجرین لائسنس کے بغیر شکر فروخت کررہے ہیں ۔ محکمہ سیول سپلائز ان کے خلاف سخت کارروائی کرے گا ۔۔

شجرکاری پروگرام میں اسپیکر تلنگانہ کی شرکت
حیدرآباد 23اگست (یواین آئی )تلنگانہ میں سرسبزی وشادابی میں اضافہ کے لئے شروع کردہ حکومت کے باوقار ہریتا ہارم پروگرام کے حصہ کے طورپر اسپیکر مدھوسدن چاری نے جئے شنکر بھوپال پلی ضلع کے چٹیال ، گناپورم منڈلوں میں مختلف مقامات پر شجرکاری کی۔ساتھ ہی انہوں نے جنگلاتی علاقہ میں بھی پودے لگائے ۔اس موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ قبل ازیں لگائے گئے پودوں کی دیکھ بھال کا کام مناسب انداز میں کیا جارہا ہے ۔انہوں نے کہاکہ بھوپال پلی ضلع میں ایک لاکھ پودے لگانے کا نشانہ دیا گیا تھا ۔اب تک کئی ہزار پودوں کی شجرکاری کی گئی ہے ۔

 

Top Stories

TOPPOPULARRECENT