Monday , August 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / شہریان بودھن صاف پینے کے پانی سے محروم

شہریان بودھن صاف پینے کے پانی سے محروم

بلدیہ لاکھوں روپئے کے اخراجات کے باوجود سربراہی آب میں ناکام
بودھن۔/12جون، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) بودھن شہر میں ان دنوں عوام الناس کو صاف محفوظ پینے کے پانی کی قلت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ بعض افراد غیر معیاری پانی فروخت کرتے ہوئے فائدہ اٹھارہے ہیں۔ شہر میں دن بہ دن نئے منیرل واٹر پلانٹس قائم کئے جارہے ہیں۔ ان پلانٹس کے ذریعہ فروخت کئے جانے والے پانی کے معیار کی تصدیق کرنے کی ذمہ داری کس کی ہے۔ عوام منیرل واٹر کے نام پر غیر معیاری پانی خرید کر پینے پر مجبور ہیں۔ محکمہ بلدیہ اور مقامی انتظامیہ آر ڈی او بودھن کی طرف سے اچھے یا خراب پانی کے پلانٹس کی تاحال نشاندہی کی گئی۔ شہر میں 20 لیٹر پانی کا باٹل 6تا15 روپئے میں فروخت کیا جارہا ہے۔ قیمت میں اتنا فرق پائے جانے کے باوجود مقامی انتظامیہ پانی کی سربراہی پر کنٹرول کرنے اور قیمت مقرر کرنے میں ناکام ہے۔31مئی کو ہوئے بلدی اجلاس میں ٹی آر ایس پارٹی کے فلور لیڈر مسٹر اعجاز خان کے سوال کے جواب میں ڈپٹی انجینئرنے بتایا تھا کہ ذخیرہ آب بلال کا پانی بودھن کیلئے ایک ماہ تک سربراہ کیا جاسکتا ہے لیکن اجلاس کے دوسرے دن سے آج 12جون تک محکمہ آبرسانی نے نلوں کے ذریعہ ایک قطرہ بھی تالاب کا پانی سربراہ نہیں کیا صدر نشین بلدیہ مسٹر ایلیا نے اجلاس کے دوران تیقن دیا تھا کہ ماہ رمضان میں نلوں سے موثر پانی کی سربراہی کے انتظامات کئے جائیں گے۔ لیکن وہ بھی ناکام رہے۔ چیرمین بلدیہ اور کمشنر مسٹر دیویندر نے لاکھوں روپئے خرچ کرتے ہوئے تالاب کا پانی واٹرفلٹر تک پہنچانے کی کوشش کی لیکن ناکام رہے اور اب خانگی بورویلس کرائے پر حاصل کرتے ہوئے اس کا پانی واٹر فلٹر بیڈ تک پہنچانے کا عوام کو تیقن دے رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT