Thursday , October 19 2017
Home / اضلاع کی خبریں / شہریان بودھن کو آبی قلت کا اندیشہ

شہریان بودھن کو آبی قلت کا اندیشہ

بلال تالاب کی سطح آب پر ارکان بلدیہ کا اظہار تشویش
بودھن۔/19مارچ، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) مجلس بلدیہ بودھن اور محکمہ آبپاشی بودھن کے درمیان عدم تال میل کے سبب موسم گرما میں شہریان بودھن کو پھر ایک مرتبہ آنے والے موسم گرما میں آبی قلت کا سامنا کرنے کے آثار نظر آرہے ہیں۔ گذشتہ روز چیرمین بلدیہ مسٹر ایلیا، کمشنر بلدیہ مسٹر سوامی نائیک نے نائب صدر نشین بلدیہ حبیب خان قدیر، رکن بلدیہ نظیر علی و دیگر عملے کے ساتھ ذخیرہ آب بلال تالاب کا دورہ کیا۔ تالاب میں موجود پانی کی سطح کی پیمائش کرنے کے بعد انہوں نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ ذخیرہ آب میں فی الفور 6.5 فٹ پانی موجود ہے، محکمہ آبپاشی کی طرف سے تالاب کا پانی گذشتہ ایک ماہ سے زرعی اغراض کیلئے چھوڑا جارہا ہے۔ چیرمین نے بتایا کہ بلال تالاب میں 12 فٹ پانی ذخیرہ کرنے کی گنجائش موجود ہے اور دیگر تالاب میں 10فٹ یا اس سے زائد پانی جمع ہو تو زرعی اغراض کیلئے چھوڑا جانا چاہیئے۔ لیکن اب تالاب میں چھ تا سات فٹ پانی جمع ہے۔ ان حالات میں پہلے تالاب کو نظام ساگر سے پانی کے حصول کے بعد سطح آب مکمل کرلینے کی سخت ضرورت ہے۔ نظام ساگر سے بلال تالاب تک صحیح طریقہ سے پانی نہ پہونچنے اور زرعی اغراض کیلئے پانی کی طلب میں اضافہ کے باعث آئندہ ماہ گرما میں شہریان بودھن کو پانی کے حصول میں دشواریاں پیش آنے کے آثار نظر آرہے ہیں۔ کمشنر بلدیہ اور چیرمین و دیگر قائدین نے محکمہ آبپاشی کے دفتر پہنچ کر وہاں پر عہدیداروں کی عدم موجودگی کے باعث فون پر ان سے ربط پیدا کرتے ہوئے اپنی تشویش کا اظہار کیا۔ بعد ازاں ضلع انتظامیہ اور ایم ایل اے بودھن کو موجودہ صورتحال سے مکتوب کے ذریعہ واقف کرواتے ہوئے تالاب کی سطح آب مکمل کرنے کیلئے نظام ساگر سے پانی چھوڑنے کی اپیل کی۔

TOPPOPULARRECENT